Tuesday , December 11 2018

کول انڈیا کے 19000 ایگزیکیٹیوز تین روزہ ہڑتال پر

نئی دہلی ۔ 13 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) کول انڈیا لمیٹیڈ (CIL) 19000 کے ایگزیکیٹیوز نے آج سے تین روزہ ہڑتال کا اعلان کیا ہے جہاں انہوں نے شکایت کی ہیکہ ان کے بیشتر مطالبات بشمول کارکردگی کے مطابق تنخواہوں کو وضع کرنا عرصہ دراز سے زیرالتواء ہیں اور ان کی یکسوئی نہیں کی جارہی ہے۔ یاد رہیکہ ایگزیکیٹیوز کی ہڑتال سے کوئلہ کی پیداوار اثرانداز ہوسکتی

نئی دہلی ۔ 13 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) کول انڈیا لمیٹیڈ (CIL) 19000 کے ایگزیکیٹیوز نے آج سے تین روزہ ہڑتال کا اعلان کیا ہے جہاں انہوں نے شکایت کی ہیکہ ان کے بیشتر مطالبات بشمول کارکردگی کے مطابق تنخواہوں کو وضع کرنا عرصہ دراز سے زیرالتواء ہیں اور ان کی یکسوئی نہیں کی جارہی ہے۔ یاد رہیکہ ایگزیکیٹیوز کی ہڑتال سے کوئلہ کی پیداوار اثرانداز ہوسکتی ہے جو کمپنی کی مشکلات میں اضافہ کا باعث ہوگی۔ دریں اثناء CIL ڈائرکٹر آر موہن داس نے کہا کہ کمپنی میں فی الحال پیداوار معمول کے مطابق ہے۔ انہوں نے کہا کہ آفیسرس ہڑتال پر ضرور ہیں لیکن پیداوار تقریباً معمول کے مطابق ہے جس کی وجہ یہ ہیکہ سینئر ایگزیکیٹیوز کوئلہ کی پیداوار میں اپنا بھرپور تعاون پیش کررہے ہیں۔ دوسری طرف کول مائنز آفیسرس اسوسی ایشن آف انڈیا (CMOAI) جس نے ہڑتال کا اعلان کیا ہے، کہا کہ کمپنی کے دعوے جھوٹے ہیں۔ ہڑتال سے پیداوار پر منفی اثرات مرتب ہوں گے۔

TOPPOPULARRECENT