Wednesday , September 19 2018
Home / اضلاع کی خبریں / کوڑنگل پر سوائن فلو کے بادل

کوڑنگل پر سوائن فلو کے بادل

خنزیروں اور آوارہ کتوں کو شہر بدر کرنے کی پرزور اپیل

خنزیروں اور آوارہ کتوں کو شہر بدر کرنے کی پرزور اپیل
کوڑنگل /2 فروری ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز ) سوائن فلو اور ڈینگو جیسی مہلک بیماریوں کے پھیلنے میں معاون بننے والے خنزیروں کی آبادی میں بے تحاشہ اضافہ ہو رہا ہے ۔ کوڑنگل کے گلی کوچوں میں یہ جانور بہ کثرت پائے جاتے ہیں ۔ کارگل کالونی ، اندرا نگر کالونی ، بالاجی نگر ، آریا نگر ، برہمن واڑی ، محلہ جامع مسجد وڈرگلی ، شیر گلی ، شیخ جی محلہ اور دھنگرواڑی وغیرہ ان کی افزائش نسل کے مراکز مانے جاتے ہیں ۔ علاوہ ازیں یہاں پر مچھروں اور آوارہ کتوں کی بھی بہتات ہے ۔ کتوں اور خنزیروں کی مدبھیڑ سے صبح کے اوقات میں اسکولی طلباء و طالبات خائف دکھائی دیتے ہیں ۔ مچھروں کی کثرت تو یہاں کا معمول بن گیا ہے ۔ خنزیر کچرے کی کنڈیوں اور سڑک سے متصل بڑی بڑی موریوں میں لوٹتے پوٹتے رہتے ہیں جس سے وافر مقرار میں کیچڑ اور کچرا سڑک پر آجانے سے ماحول مزید تعفن کا باعث بن جاتا ہے ۔ یہ جانور جھاڑیوں گلی کوچوں کے علاوہ شاہراہوں پر بھی آزادانہ گشت کرتے رہتے ہیں ۔ جس سے ان کی غلاظت سے راہروں کو پیدل چلنے کے دوران کافی احتیاط برتنی پڑتی ہے ۔ اگر ان جانوروں پر قابو نہ پایا گیا تو سوائن فلو کے پھیلنے کے قوی امکانات ہیں ۔ موجودہ طور پر سوائن فلو کی وباء نے ریاست تلنگانہ پر اپنی کمند ڈال رکھی ہے ۔ مستقر شہر حیدرآباد کے علاوہ اضلاع بھی اس کی لپیٹ میں آگے ہیں ۔ وقف وقفہ سے بیشتر لوگوں کی اس مرض میں مبتلا ہونے کی اطلاعات ہیں ۔ شعور بیداری پروگرامس بھی منعقد کئے جاکر عوام کو احتیاطی تدابیر اختیار کرنے کیلئے راغب کرنے کی ہرممکنہ کوششیں کی جارہی ہیں ۔ اس کے باوجود بھی بعض مقامات کا ماحول حسب ماضی بحال ہے ۔ نیز راتوں کے اوقات میں آوارہ کتوں کے بھونکنے کی آوازوں سے بھی نیندوں میں خلل پڑ رہا ہے ۔ عوام ارباب مجاز سے گذارش ہے کہ خنزیروں اور آوارہ کتوں کو منظم طور پر شہر بدر کرنے کا انتظام کرے تاکہ سوائن فلو اور ڈینگو جیسی مہلک بیماریوں کا تدارک ہوسکے ۔

TOPPOPULARRECENT