Tuesday , November 21 2017
Home / ہندوستان / کوکرا جھار میں این آئی اے ٹیم کی عینی شاہدین سے پوچھ تاچھ

کوکرا جھار میں این آئی اے ٹیم کی عینی شاہدین سے پوچھ تاچھ

مفرور عسکریت پسندوں کی تلاشی کیلئے فوج اور نیم فوجی دستوں کی خدمات
کوکرا جھار (آسام) 6 اگسٹ (سیاست ڈاٹ کام) نیشنل انوسٹی گیشن ایجنسی (این آئی اے) کی ٹیم نے آج اس مقام کا دورہ کرکے عینی شاہدین سے معلومات حاصل کیں جہاں پر کل دہشت گردانہ حملہ میں 14 افراد ہلاک ہوگئے تھے۔ اس حملہ میں ملوث بوڈو علیحدگی پسند تنظیم این ڈی ایف بی (ایس) کے مشتبہ عسکریت پسندوں کو پکڑنے کے لئے تلاشی مہم شروع کردی گئی ہے۔ آسام کے وزیر فینانس ہنیمتا بسواس نے جائے وقوع (حملہ کا مقام) کا دورہ کرنے کے بعد بتایا کہ کل جس عسکریت پسند کو مار گرایا گیا تھا اس کی شناخت سنجے اسلاری کی حیثیت سے کردی گئی ہے اور وہ این ڈی ایف بی (ایس) کے 16 ویں بٹالین کا خود ساختہ علاقائی کمانڈر تھا جس کی نعش اس کے والدین کے حوالے کردی جائے گی۔ وزیر موصوف نے بتایا کہ بلاجان تنیسالی مارکٹ میں حملہ کے بعد فرار عسکریت پسندوں کو پکڑنے کے لئے تلاشی مہم میں شدت پیدا کردی گئی۔ یہ حملہ ایسے وقت کیا گیا ہے جبکہ یوم آزادی کی تقاریب کے لئے چند دن باقی رہ گئے ہیں۔ ایک سوال کے جواب میں انھوں نے کہاکہ یہ عسکریت پسند ، خودکش دستہ کا حصہ نہیں تھے۔ اگر وہ ہوتے تو راہ فراری اختیار نہیں کرتے۔ دریں اثناء این آئی اے کی ایک ٹیم جائے وقوع پہنچ کر عینی شاہدین سے پوچھ تاچھ کی ہے جبکہ پولیس، نیم فوجی دستہ اور فوج کی مشترکہ ٹیموں نے پڑوسی ضلع چیرانگ میں عسکریت پسندوں کو پکڑنے کے لئے تلاشی مہم شروع کردی ہے۔ محکمہ دفاع کے ذرائع نے بتایا کہ خصوصی تربیت یافتہ دستوں، کھوجی کتوں اور دیگر آلات کو خدمات پر متعین کردیا گیا۔ پولیس نے بتایا کہ کوکرا جھار میں صورتحال کشیدہ لیکن قابو میں ہے۔ چیف منسٹر سربانندا سونوال نے گوہاٹی میڈیکل کالج میں زیرعلاج شدید زخمیوں سے ملاقات کرکے صحت کے بارے میں معلومات حاصل کیں۔

TOPPOPULARRECENT