Thursday , November 23 2017
Home / کھیل کی خبریں / کوہلی 151* ، ویزاگ ٹسٹ کے پہلے روز انڈیا 317/4

کوہلی 151* ، ویزاگ ٹسٹ کے پہلے روز انڈیا 317/4

پجارا (119) کی بھی سنچری ۔ اینڈرسن کو 3 وکٹیں ۔ تینوں انگلش اسپنرز 49 اوورز پھینکنے کے باوجود وکٹ سے محروم

وشاکھاپٹنم ، 17 نومبر (سیاست ڈاٹ کام) کپتان ویراٹ کوہلی (151 ناٹ آؤٹ) اور چتیشور پجارا (119) کی شاندار سنچریوں اور ان کے درمیان تیسرے وکٹ کیلئے 226رنز کی زبردست شراکت کی بدولت ہندستان نے انگلینڈ کے خلاف دوسرے کرکٹ ٹسٹ کے پہلے دن جمعرات کو چار وکٹ پر 317 رن کا مضبوط اسکور بنا لیا۔ پجارا اور ویراٹ نے ہندستان کو دو وکٹ پر 22 رنز کی نازک صورتحال سے نکالا اور دن کے اختتام تک مضبوط پوزیشن میں پہنچا دیا۔دونوں نے تیسری وکٹ کیلئے 61.4 اوور میں 226 رن کی قیمتی شراکت کی۔پجارا نے اپنی 10 ویں سنچری اور ویراٹ نے 14 ویں سنچری بنا ئی ۔ پجارا نے اپنی اننگز کے دوران 3000 ٹسٹ رنز بھی پورے کرلئے ۔ کپتان ویراٹ نے اپنے کیریئر میں چوتھی بار 150 سے زیادہ کا اسکور بنا یا ہے ۔ویراٹ نے 241گیندوں پر ناٹ آؤٹ 151 رنز میں 15چوکے لگائے ہیں جبکہ پجارا نے 204 گیندوں کی اپنی اننگز میں 12 چوکے اور دو چھکے لگائے ہیں۔پجارا نے اپنی سنچری 184 گیندوں میں اور ویراٹ نے 154 گیندوں میں مکمل کی۔ پہلے ٹسٹ کے مقابل انگلینڈ کے اسپنرز آج کوئی کامیابی حاصل نہیں کرپائے۔

ظفر انصاری (0/45)، عادل رشید (0/85) اور معین علی (0/50) نے دن بھر مجموعی طور پر 49 اوورز پھینکے مگر انھیں کوئی وکٹ نہ ملی۔ اپنا 50واں ٹسٹ کھیل رہے ویراٹ نے دوسرے میچ میں صبح ٹاس جیت کر پہلے بلے بازی کرنے کا فیصلہ کیا۔ہندستان نے اپنی ٹیم میں دو تبدیلیاں کرتے ہوئے اوپنر گوتم گمبھیر کی جگہ اوپنر لوکیش راہول کو اور لیگ اسپنر امیت مشرا کی جگہ آف اسپنر جینت یادو کو قطعی XI میں شامل کیا۔ہریانہ کے جینت کو اس طرح اپنا ٹسٹ کیریئر شروع کرنے کا موقع ملا۔ ٹاس جیت کر پہلے کھیلتے ہوئے ہندوستان کی شروعات اچھی نہیں رہی۔اس میچ سے پہلے راجستھان کے خلاف رانجی میچ میں سنچری بنانے والے کرناٹک کے لوکیش کی ٹیم میں واپسی خوشگوار نہیں رہی اور وہ کھاتہ کھولے بغیر دوسرے ہی اوور میں اسٹورٹ براڈ (1/39) کا شکار بن گئے ۔وہ براڈ کی اضافی اچھال والی گیند پر تیسری سلپ میں بین اسٹوکس کو کیچ تھما بیٹھے ۔ مرلی وجے نے اگرچہ قابل اعتماد آغاز کیا اور 21 گیندوں پر 20 رنز میں چار بہترین چوکے لگائے ۔اس کے ساتھ ہی انہوں نے اپنے 3000 رنز بھی پورے کر لئے ۔جب ایسا لگ رہا تھا کہ وجے اپنی اننگز کو طویل کریں گے کہ تبھی تیز گیند باز جیمز اینڈرسن (3/44) کی اٹھتی ہوئی گیند اُن کے دستانے کو چھوکر سلپ میں اسٹوکس کے ہاتھوں میں سما گئی۔اینڈرسن چوٹ پر قابو پانے کے بعد اس میچ کیلئے مہمان ٹیم میں شامل کئے گئے اور صبح اپنی اچھال والی گیندوں سے دکھایا کہ وہ مکمل فٹ ہیں۔

TOPPOPULARRECENT