Saturday , November 18 2017
Home / بچوں کا صفحہ / کیا بات ہے

کیا بات ہے

٭ ایک پروفیسر کلاس میں آئے اور بچوں سے کہا ’’ آج میں آپ کو مینڈک کے بارے میں بتاوں گا ‘‘ یہ کہہ کر انہوں نے جیب میں ہاتھ ڈالا تو ان کے ہاتھ میں کیک تھا ۔ یہ دیکھ کر پروفیسر نے کہا ’’ ارے یہ تو کیک ہے تو پھر وہ کیا چیز تھی ‘ جو میں نے راستے میں کھائی تھی ‘ ‘ ۔
٭ نوادرات کی دوکان پر کافی دیر تک مختلف چیزیں دیکھنے کے بعد گاہک نے ایک طرف اشارہ کرتے ہوئے پوچھا ’’اس مجسمے کی کیا قیمت ہے ؟ دکاندار نے جواب دیا : جناب ! وہ مجسمہ نہیں میرے دادا جان ہیں جو گاہکوں کی نگرانی کیلئے بیٹھے ہیں ۔
٭ مریض ’’ ڈاکٹر صاحب آپریشن کے بعدمجھے پیاس بہت زیادہ لگنے لگی ہے ‘‘ ۔ ڈاکٹر : معاف کرنا بھائی ! میں روئی کا گولا تمہارے پیٹ میں بھول گیا ہوں ۔

TOPPOPULARRECENT