Tuesday , September 25 2018
Home / Top Stories / کیا 2000 روپئے کی کرنسی نوٹ بند ہوجائے گی ؟

کیا 2000 روپئے کی کرنسی نوٹ بند ہوجائے گی ؟

پانچ شہروں میں 10 روپئے کی پلاسٹک نوٹوں کا آزمائشی چلن

حیدرآباد /16 مارچ ( سیاست نیوز ) مرکز کی نریندر مودی حکومت نے گذشتہ سال نومبر میں 500 اور 1000 روپئے کی نوٹوں کو بند کرکے ملک بھر میں مالیاتی بحران پیدا کیا تھا اس کے بعد 2000 اور 500 روپئے کی نئی نوٹ جاری کی گئی ۔ اب قیاس کیا جارہا ہے کہ 2000 روپئے کی نئی نوٹ کو بھی بند کیا جائے گا ۔ اگرچیکہ حکومت نے اس سلسلہ میں پارلیمنٹ میں وضاحت کی کہ 2000 روپئے کی کرنسی نوٹ کے چلن کو روکنے کی کوئی تجویز نہیں ہے لیکن مالیاتی سرگرمیوں کا تجزیہ کرنے والوں نے اندیشہ ظاہر کیا کہ یہ حکومت کبھی بھی نوٹ بند بندی کا فیصلہ ۔کرسکتی ہے ۔500 اور 2000 روپئے کے نئی نوٹوں پر مہاتما گاندھی کی تصویر کے ساتھ اس کا حجم علی التربیت 150MMx66MM اور MM66اور MM166 ہے ۔ ان دونوں نئی کرنسیوں کے درمیان فرق صرف 10 ایم ایم کا ہے اور اس کی آسانی سے شناخت ہوجاتی ہے ۔ لوک سبھا میں یہ بھی بتایا گیا ہے کہ حکومت کی جانب سے 10 روپئے کے پلاسٹک نوٹوں کو آزمائشی طور پر چلایا جارہا ہے ۔ مملکتی وزیر برائے فینانس کا رادھاکرشنن نے ایک تحریری جواب میں کہا کہ کوچی ، میسور ، جئے پور ، شملہ اور بھونیشور میں 10 روپئے کے پلاسٹک نوٹوں کو چلایا جارہا ہے ۔ فینانشیل اکسپریس نے رپورٹ دی ہے کہ حکومت کی جانب سے 2000 روپئے کے نوٹوں کا چلن روک دینے کا فیصلہ نہیں کیا گیا ۔ لیکن اندیشہ ہے کہ یہ کسی بھی وقت فیصلہ کرسکتی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT