Monday , December 18 2017
Home / ہندوستان / کیرالا آر ٹی سی ملازمین کی توہم پرستی

کیرالا آر ٹی سی ملازمین کی توہم پرستی

بس ڈپو سے بدروحوں کو بھگانے کیلئے پوجا پر تنازعہ
کیسراگڈ ( کیرالا ) ۔ 25 ۔ نومبر : (سیاست ڈاٹ کام ) : شمالی کیرالا کے ضلع کیسراگڈ میں ایک آر ٹی سی بس اسٹیشن میں بدروحوں کو بھگانے کے لیے پوجا کا اہتمام کرنے پر تنازعہ پیدا ہوگیا ہے ۔ آر ٹی سی بس ڈپو میں 22 اکٹوبر کو یہ پوجا کروائی گئی تھی ۔ جس کی تصاویر آج ٹیلی ویژن چیانلس پر پیش کی گئی ۔ اس تنازعہ پر صدر نشین و منیجنگ ڈائرکٹر KSRTC مسٹر انتونی چکو نے بتایا کہ اس واقعہ کی تحقیقات کا حکم دیدیا گیا اور رپورٹ میں بدروحوں کو بھگانے کے لیے قابل اعتراض رسومات ادا کرنے کی تصدیق ہوگئی تو قصور واروں کے خلاف کارروائی کی جائے گی ۔ انہوں نے بتایا کہ وہاں پر صرف ایودھا ( اوزاروں ) کی پوجا کی گئی تھی ۔ جس کا کارپوریشن سے کوئی تعلق نہیں ہے اور ملازمین کی جانب سے اہتمام کردہ پوجا پر کوئی پابندی نہیں ہے ۔ یہ نشاندہی کیے جانے پر پوجا کے وقت ڈسٹرکٹ ٹرانسپورٹ آفیسر بھی موجود تھے ۔ انہوں نے کہا کہ عموماً پوجا کے دوران تمام ملازمین شریک رہتے ہیں ۔ جب کہ کیرالا اسٹیٹ روڈ ٹرانسپورٹ کارپوریشن کے بعض ملازمین نے بتایا کہ بس اسٹیشن میں شیطان ہونے کی وجہ سے اکثر و بیشتر سڑک حادثات پیش آرہے ہیں ۔ جسے بھگانے کے لیے ایک نجومی کی نگرانی میں پوجا پاٹ کروایا گیا تھا اور اس کا ایودھا پوجا سے کوئی تعلق نہیں ہے ۔

TOPPOPULARRECENT