Wednesday , November 22 2017
Home / شہر کی خبریں / کے سی آر نے دواخانہ عثمانیہ کے انہدام کا منصوبہ ترک کردیا

کے سی آر نے دواخانہ عثمانیہ کے انہدام کا منصوبہ ترک کردیا

حیدرآباد ۔ 3 اگسٹ ۔ (آئی این این ) تلنگانہ کے چیف منسٹر کے چندرشیکھر راؤ نے باور کیا جاتا ہے کہ دواخانہ عثمانیہ کی تہذیبی ورثے کی حامل عمارت کو منہدم کرنے کی تجویز سے دستبرداری اختیار کرلی ہے ۔ ذرائع کے مطابق اپوزیشن جماعتوں کے علاوہ سماج کے مختلف طبقات کی جانب سے کئے جانے والے سخت ترین اعتراضات کے پیش نظر اپنے اس فیصلے سے دستبرداری اختیار کی ہے ۔ کے سی آر نے مزید تنقیدوں اور اعتراضات سے بچنے کیلئے اس عظیم تاریخی عمارت کی انہدامی کے منصوبوں کو ترک کردیاہے ۔ تاہم چیف منسٹر نے دواخانہ عثمانیہ کے احاطہ میں واقع 2.5 ایکر اراضی پر نئی عمارت کی تعمیر کیلئے عہدیداروں کو منصوبہ تیار کرنے کی ہدایت دی ہے لیکن سرکاری طورپر اس کی توثیق نہیں ہوئی ہے ۔تاریخی و تہذیبی ورثے کی حامل اس عمارت کے انہدام کے خلاف غیرسرکاری تنظیم انٹیاک نے بھی احتجاج کیا تھا اور اپنی رپورٹ میں کہاکہ اس عمارت کو کوئی خطرہ لاحق نہیں ہے تاہم تمام دیگر عمارتوں کی طرح اس کی بھی موثر دیکھ بھال اور وقفہ وقفہ سے تعمیر و مرمت ضروری ہے۔ اس دواخانہ کے ڈاکٹرس اور عملہ کے ارکان بھی انہدامی کے مسئلہ پر منقسم ہوگئے ہیں ۔

TOPPOPULARRECENT