Thursday , September 20 2018
Home / اضلاع کی خبریں / کے سی آر کے فیصلوں سے ریاست ترقی میں دو سال پیچھے

کے سی آر کے فیصلوں سے ریاست ترقی میں دو سال پیچھے

جگتیال رکن اسمبلی ڈپٹی فلور لیڈر جیون ریڈی کا میڈیا سے خطاب

جگتیال /13 جولائی ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز ) جگتیال رکن اسمبلی کانگریس ڈپٹی فلور لیڈرٹی جیون ریڈی نے گذشتہ شام اپنی رہائش گاہ پر صحافیوں کی منعقدہ پریس کانفرنس کو مخاطب کرتے ہوئے ٹی آر ایس حکومت کو تنقید کا نشانہ بنایا انہوں نے کہا کہ ٹی آر ایس حکومت اشتہار بازی میں جاکر تلنگانہ ریاست کو رہن نہ رکھے ریاست میں چیف منسٹر کی حماقت میں بڑھتے ہوئے قرض انہوں نے کہا کہ کانگریس برسرے اقتدار آنے پر تمیٹڈی ہٹی پا س بیاریج کی تعمیر کریگی ۔ اور اسی میں ٹی آر ایس کے پاپوں کو دھوئنگے ، اس موقع پر انہوں نے کہا کہ 2004انتخابات میں کانگریس پارٹی اقتدار پارٹی حاصل کرنے کے بعد فضول ضائے ہونے والے ندی کے پانی کو جمع کرتے ہوئے تلنگانہ کو سر سبز شاداب کرنے کیلئے فیصلہ لیا گیا تھا۔ اسی کومد نظر رکھتے ہوئے پرانہتا پراجکٹ پر 160TMCپانی کے حق کو استعمال کرنے کیلئے تمییڈی ہٹی کے قریب 152میٹرس انچائی گیاریج کی تعمیر ایک لفٹ سے ایلم پلی پراجکٹ کو پنچا کر وہاں سے میڈارام کے ذریعہ میڈے مینانیر کو پانی منتقل کر کے 16لاکھ ایکڑ اراضی کو سیرآب کرنے 38ہزار کروڑ سے تعمیری کام کئے گئے ، تمیڈی ہٹی پر گیاریج کی تعمیر کرتے ہوئے 160TMCپانی کو منتقل کرنے میڈارام تک72میٹر کنال کی تعمیر عمل میں آئی، میڈارم سے اور نیجے جانے کیلئے کنال تعمیر کرتے ہوئے صرف ایک لفٹ کے ذریعہ پانی منتقل کرنے کاموقع رہنے کے باوجود ٹی آر ایس حکومت تمیڈی ہٹی سے اننارام کو ایک اور اننارام سے سودیلہ کو ایک لفٹ نصب کرنے کی ضرورت تھی۔جس سے 20ہزار کروڑ کے تعمیری کام میں اضافہ کے علاوہ ہر یونٹ پر 4ہزار میگا واٹ برقی کا علحدہ بوجھ پڑرہاہے، ہر یونٹ پر پانچ ہزار کروڑ کی تعمیری بوجھ ریاست پر پڑھ رہا ہے، اگر یہی تمیڈی ہٹی کے پاس بیاریج کی تعمیر عمل میں لائی جاتی تعمیری اخراجات میںکسی حد تک کمی واقع ہوتی۔ تمیڈی ہٹی سے میڈی گڈہ کو لے جاناہی بڑی غلطی ۔ معلومات رکھنے والا کوئی بھی ایسی غلطی نہیں کریگا۔ کے سی آر کے تنہا فیصلوں کی وجہ سے ریاست ترقی میں دو سال پیچھے ہوگیا ہے، 38ہزار کروڑ نے مکمل ہونے والے پراجکٹ کو لاکھوں کروڑ کا اضافہ کرتے ہوئے ریاست پر معالی بوجھ ڈالنے کا الزام لگایا۔ ٹی آر ایس حکومت نہ تجربہ کارفیصلوں کی وجہ سے تلنگانہ ریاست دن بہ دن قرض کے بوجھ دفن ہورہی ہے، 2014سے قبل تلنگانہ کا قرض 60ہزار کروڑ چار سالہ ٹی آر ایس دوراقتدارمیں قرض 2لاکھ کروڑ کو پہنچ گیا ہے ،ریاست کو رہن رکھے جیسا حکومت کے اقدامات مناسب نہیں ہے حکومت کے غلط فیصلوں کی وجہ سے، مستقبل میںمیڈی گڈٖہ کالیشوارم پراجکٹ صرف سیاحتی مراکز کی طرح باقی رھہ جانیگے اس موقع پر بلدیہ چیر پرسن ٹی وجیہ لکشمی ، دھرم پوری کانگریس حلقہ انچارج الوری لکشمن کمار ،بنڈا شنکر ،گنگادھر ، مکثر علی نہال ،ریاض،کلیم اور دیگر موجود تھے۔

TOPPOPULARRECENT