Friday , April 20 2018
Home / شہر کی خبریں / کے سی آر کٹس اسکیم کے بعد سرکاری دواخانوں پر عوام کے اعتماد میں اضافہ

کے سی آر کٹس اسکیم کے بعد سرکاری دواخانوں پر عوام کے اعتماد میں اضافہ

حاملہ خواتین کو امدادی رقم اور کٹس کی فراہمی، اسمبلی میں وزیر صحت لکشما ریڈی کا بیان
حیدرآباد۔19 مارچ (سیاست نیوز) وزیر صحت ڈاکٹر لکشما ریڈی نے کہا کہ حکومت کی جانب سے سرکاری دواخانوں میں حاملہ خواتین کے لیے کے سی آر کٹ اسکیم متعارف کرنے کے بعد زچگیوں کی تعداد میں اضافہ ہوا ہے۔ ٹی آر ایس ارکان جی سنیتا اجمیرا ریکھا اور دوسروں کے سوال کے جواب میں وزیر صحت نے بتایا کہ سرکاری دواخانوں میں زچگیوں کی تعداد 31 فیصد سے بڑھ کر 50 فیصد ہوچکی ہے۔ انہوں نے کہا کہ اسکیم کے آغاز سے سرکاری دواخانوں پر عوام کے اعتماد میں اضافہ ہوا ہے۔ انہوں نے کہا کہ عام طور پر یہ رجحان تھا کہ سرکاری دواخانوں میں خواتین کے لیے مناسب انتظامات نہیں ہوتے اور جبراً آپریشن کیا جاتا ہے لیکن اب یہ تاثر ختم ہونے لگا ہے۔ انہوں نے کہا کہ کے سی آر کٹ اسکیم کے تحت 4 لاکھ 41 ہزار 554 خواتین کو فائدہ پہنچا۔ اسکیم کے تحت ان خواتین کو ٹیکہ اندازی کے علاوہ مالی امداد فراہم کی گئی۔ انہوں نے بتایا کہ ایم ایچ ایم اسکیم کے تحت 597 میڈیکل آفیسرس اور 1561 اسٹاف نرسس کا تقرر کیا گیا۔ ریاستی حکومت کی جانب سے جاریہ سال 10 ہزار جائیدادوں پر تقررات کا منصوبہ ہے۔ محکمہ صحت میں یہ تقررات پر پبلک سرویس کمیشن اور اسٹاف سلیکشن کمیشن کے ذریعہ عمل میں آئیں گے۔ لکشما ریڈی نے بتایا کہ جاریہ سال لیبر رومس کو معیاری بنانے کا کام شروع کیا گیا ہے۔ ابھی تک 231 لیبر رومس کو ترقی دی گئی۔ دکشتا پروگرام کے تحت ڈاکٹرس اور پیرامیڈیکل اسٹاف کو ٹریننگ دی جاتی ہے۔ انہوں نے کہاکہ اکٹوبر 2017ء سے بہتر میٹرنٹی خدمات کے لیے کورس متعارف کیا گیا جس میں 130 اسٹاف نرسس زیر تربیت ہیں۔ حاملہ خواتین کو لے جانے کے لیے 102 گاڑیاں متعارف کی گئی ہیں۔ ایک اور سوال کے جواب میں وزیر صحت نے بتایا کہ حکومت ریاست بھر میں عوام کا مفت آنکھوں کا معائنہ کرانے کا منصوبہ رکھتی ہے۔ ہر موضع میں آئی کیمپس منعقد کیئے جائیں گے اور مکمل آبادی کا یکساں آئی سروے کیا جائے گا۔ ایسے افراد جنہیں آپریشن کی ضرورت ہو، سرکاری اور خانگی ہاسپٹلس میں آپریشن کیئے جائیں گے۔ ضرورتمند افراد کو مفت عینکیں تقسیم کی جائیں گی۔

TOPPOPULARRECENT