Thursday , November 23 2017
Home / شہر کی خبریں / گاؤں میں کوئی مسلمان نہیں ! ہندو بھائی مسلمانوں کی طرح عید مناتے ہیں

گاؤں میں کوئی مسلمان نہیں ! ہندو بھائی مسلمانوں کی طرح عید مناتے ہیں

سریکا کلم ۔ /13 اکٹوبر (ایجنسیز ) نرسنا پیٹا منڈل میں جو ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹرس سے 25 کلو میٹر کی دوری پر ایک ولیج ہے ، ہندوؤں کی جانب سے روایتی پیرلا اتسوم منایا جاتا ہے جس کے بارے میں ان کا خیال ہے کہ یہ ایک مسلم فیسٹول ہے ۔ کہا جاتا ہے کہ ایک صدی قبل اس گاؤں کے 17 مسلم خاندان نے اس روایت کا آغاز کیا تھا جس میں ہر سال 12 روز تک یہ تہوار منایا جاتا ہے ۔ اس گاؤں کے ایک عمر رسیدہ شخص اپیا کا کہنا ہے کہ یہ بات نہیں ہے کہ ہم دسہرہ نہیں مناتے مگر پیرلا اتسوم کو زیادہ ترجیح دیتے ہیں اور تقریباً ایک صدی سے اس گاؤں میں یہ تہوار منایا جارہا ہے ۔ اس گاؤں کے مسلمان دوسرے مقامات کو نقل مقام کرگئے ہیں ۔ اس لئے ہندو اس روایتی تہوار کا اہتمام کررہے ہیں اور اسے منارہے ہیں ۔ اب اس گاؤں میں کوئی مسلم خاندان نہیں ہے ۔ لیکن ہم اس فیسٹول کو دھوم دھام سے مناتے ہیں ۔ یہ ہمارے لئے ایک تہوار سے بڑھ کر ایک روایت ہے ۔ ہمیں پورا یقین ہے کہ اللہ ہمارے مسائل کو  حل کرے گا ۔ اس سال دسہرہ اور محرم بیک وقت ہونے کے باوجود اس گاؤں کے لوگ پیرلا اتسوم کے انتظامات میں زیادہ مصروف رہے ۔ گاؤں کے لوگ ایک ون روم درگاہ پر اس فیسٹول کیلئے عطیات دیتے ہیں ۔ مذہبی رسوم کو انجام دینے کے لئے قریب کے گاؤں سے ایک مسلمان شخص کو بلایا جاتا ہے ۔ اس میں ڈیگوریٹیو فیبرکس اور مور کے پروں سے لپٹے اسٹکس کو استعمال کیا جاتا ہے ۔ یہ رسومات ہندو اور اسلامک روایات کا ایک امتزاج ہوتے ہیں ۔ محرم کی سات تاریخ کو ایک بڑا جلوس نکالا جاتا ہے اور ہلدی کے پانی سے بھرے گھڑوں کو سجائے ہوئے ڈپوٹ انگار پر چلتے ہیں ۔ موجودہ درگاہ کی تعمیر 40 سال قبل ہوئی تھی اور اب یہ خستہ حالت میں ہے اس لئے گاؤں کے لوگ مقامی لوگوں کے عطیات کے ساتھ اس کی تزئین نو کرنے کی کوشش کررہے ہیں ۔ ولیج درگاہ کمیٹی کے ایک ممبر چٹی بابو نے کہا کہ ’’ہم نے چند سال قبل قریبی ٹاؤں کو منتقل ہونے والے مسلم شخص کو پھر سے گاؤں میں لایا ہے تاکہ درگاہ میں روزانہ کے امور انجام دیئے جاسکیں ۔ چٹی بابو نے کہا کہ اس فیسٹول میں ہر سال تقریباً 20,000 لوگ حصہ لیتے ہیں ۔ اور اس فیسٹول میں گاؤں والوں کے تمام رشتہ داروں کو مدعو کیا جاتا ہے اور لذیذ اور ذائقہ دار غذا انہیں پیش کی جاتی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT