Tuesday , November 21 2017
Home / Top Stories / گائورکھشکوں کے حملہ میں جاں بحق ایوب کا خاندان بے سہارا

گائورکھشکوں کے حملہ میں جاں بحق ایوب کا خاندان بے سہارا

معاوضہ ادا کرنے سے حکومت انجان، عوام سے مالی تعاون کی اپیل
احمد آباد۔10 اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) ایک مسلم خاندان پر 13 ستمبر کا دن مصیبت کا پہاڑ بن کر ٹوٹ پڑا جب عید الاضحی کی خوشیاں منانے کی تیاریاں جاری تھیں۔ ایس یو گاڑی کے ڈرائیور ایوب ایک بیل اور ایک بچھڑا لے جارہے تھے کہ حادثہ کا شکار ہوگئے۔ اس حادثہ میں بچھڑا مرتگیا اور بیل زندہ بچ گیا۔ مقام حادثہ میں ٹہرے ہوئے بعض لوگوں نے یہ منظر دیکھ کر ایوب کی طرف دوڑ پڑے اور زور زور سے چیخنے لگے کہ وہ ذبیحہ جانور لے جارہا ہے۔ ایوب جب گائو رکشکوں سے خوفزدہ ہوکر بھاگنے لگے۔ ہجوم نے ان کا تعاقب کرکے لاٹھیوں اور سلاخوں سے حملہ کرکے شدید زخمی کردیا لیکن خوداسختہ گائو رککشکوں کو یہ اختیار کس نے دیا کہ قانون شکنی کرتے ہوئے لوگوں کو موت کے گھاٹ اتاردیا جائے۔ ایوب نے 16 ستمبر کے وقت آخری سانس لی جب وزیراعظم نریندر مودی گجرات  میں اپنی سالگرہ کا جشن منارہے تھے۔ ایک 9 ماہ کا شیرخوار بشہ 4 سال کا لڑکا ایک بیوہ اور ایک ماں اپنے والد، شوہر اور فرزند سے محروم ہوگئے۔ اس دلخراش واقعہ پر روزنامہ سیاست سے بات چیت کرنے والے جن سنگھرش منچ کے رکن شمشاد پٹھان جوکہ مرحوم ایوب میواتی خاندان کے وکیل بھی ہیں بتایا ہے کہ  اس ظلم کے خلاف آواز بلند کرنے کی ضرورت ہے تاکہ متاثرہ خاندان کی بازآبادکاری کے لئے انہیں انصاف فراہم کیا جاسکے۔ پورے خاندان کی ذمہ داری ایوب کے کاندھوں پر تھی جس میں ان کے والدین اسحاق اور معراج بانو اور غیرشادی شدہ بہن یاسمین بانو اور بھائی محمد عارف اور ایک بیوہ اور دو بچے شامل ہیں۔ شمشاد پٹھان کا مطالبہ کیا کہ سوگوار خاندان کے لئے حکومت کی جانب سے معاوضہ ادا کیا جائے لیکن اب تک کوئی امداد فراہم نہیں کی گئی اور جبکہ ایوب کی موت کے بعد یہ خاندان معاشی تنگدسی کا شکار ہوگیا ہے۔ ایڈیٹر روزنامہ سیاست جناب زاہد علی خان نے عوام بالخصوص قارئین سے پرزور اپیل کی ہے کہ سوگوار خاندان کی امداد کیلئے ممکنہ تعاون کریں۔ جن کے اکائونٹ نمبر کی تفصیلات مندرجہ ذیل ہے۔ Meraj Banu and Sarina Banu, A/C No. 210310510016513, Bank of India (Vatva branch), IFSC Code: BKID0002103

TOPPOPULARRECENT