Thursday , December 13 2018

گجرات انتخابات کا تجزیہ شروع، کانگریس کی خود احتسابی

صدر کانگریس راہول گاندھی کی جمعہ کے دن سے شرکت متوقع
احمد آباد۔20 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) گجرات اسمبلی انتخابی نتائج کے دودن بعد کانگریس نے آج انتخابی نتائج کا تجزیہ کرنا شروع کردیا اور اس سلسلہ میں خود احتسابی کا بھی آغاز ہوا۔ یہ چوٹی کانفرنس تین دن جاری رہے گی۔ صدر کانگریس راہول گاندھی کی اس میں جمعہ کے دن سے شرکت متوقع ہے۔ ’چنتن شیور‘ (احتسابی کیمپ) میں کانگریس قائدین اور کارکن انتخابی نتائج کا تجزیہ کریں گے۔ ضلع واری سطح پر تجزیہ کے بعد آئندہ لائحہ عمل پر غور کیا جائے گا۔ 2019ء میں لوک سبھا انتخابات مقرر ہیں۔ ریاستی صدر بھرت سنہہ سولنکی نے کہا کہ انتخابات میں نتائج جن کا پیر کا دن اعلان کیا گیا، کانگریس نے بی جے پی سے اقتدار چھین لیا ہوتا۔ حالانکہ اسے صرف 77 نشستیں حاصل ہوئیں۔ تاہم اس نے گزشتہ کی بہ نسبت اپنی نشستوں میں اضافہ کیا۔ کانگریس کی حلیف بھارتیہ ٹرائبل پارٹی کو دو نشستیں حاصل ہوئیں۔ اس کے علاوہ دو آزاد امیدواروں کو جنہیں کانگریس کی تائید حاصل تھی، انتخابی کامیابی حاصل کی ۔ اس طرح کانگریس زیر قیادت اتحاد 80 نشستیں حاصل کرنے میں کامیاب رہا۔ سادہ اکثریت کے لیے اسے صرف 12 نشستوں کی ضرورت تھی۔ اسمبلی میں 182 نشستیں ہیں۔ بی جے پی نے چھٹویں مرتبہ اقتدار پر قبضہ برقرار رکھا حالانکہ اس کی نشستیں جو 2012ء میں 115 تھیں کم ہوکر 99 ہوگئیں۔ کانگریس نے گجرات کے شہری علاقوں میں شاندار مظاہرہ کیا لیکن مضافاتی علاقوں میں اپنا نمایاں کام جاری نہیں رکھ سکی۔ چوٹی کانفرنس کا مقام آج اور کل ضلع مہسانہ کا ایک سیاحتی مرکز ہوگا۔ تیسرے اور آخری دن چوٹی کانفرنس احمد آباد میں منتقل کی جائے گی جس میں راہول گاندھی بھی شریک ہوں گے۔ راہول گاندھی نے ریاست گجرات اسمبلی انتخابات میں شدت سے انتخابی مہم چلائی تھی۔ وہ جمعہ کے دن کانگریس کارکنوں سے خطاب کریں گے۔ گجرات پردیش کانگریس کمیٹی کے صدر نے چنتن شیور کا اسمبلی انتخابی نتائج کے تجزیہ کے مقصد سے اہتمام کیا ہے۔ اسمبلی انتخابی نتائج پر غور کیا جائے گا تاکہ تنظیم کو مستحکم کرنے کے لیے آئندہ لائحہ عمل کو قطعیت دی جاسکے اور عوام سے ربط میں اضافہ کیا جاسکے۔ سولنکی نے پریس کانفرنس میں کہا کہ 2019ء میں عام انتخابات مقرر ہیں۔ دو دن تک ہماری چوٹی کانفرنس مہسانہ اور تیسرے دن احمد آباد میں ہوگی جہاں صدر کانگریس پارٹی کارکنوں سے خطاب کریں گے۔ کانگریس کے جنرل سکریٹری اور انتخابی انچارج برائے گجرات اشوک گیہلوٹ نے پارٹی کی انتخابی کارکردگی پر اظہار اطمینان کیا اور کہا کہ الیکشن کمیشن کا رویہ قابل اعتراف تھا۔ انہوں نے کہا کہ نشستوں اور انتخابی مہم چلانے کے اعتبار سے کانگریس نے حیرت انگیز طور پر بہترین مظاہرہ کیا حالانکہ ہم حکومت قائم نہیں کرسکے لیکن یہ چوٹی کانفرنس بی جے پی میں ہلچل مچاچکی ہے۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT