Monday , November 20 2017
Home / ہندوستان / گجرات میں گردہ فروخت ریاکٹ بے نقاب تحقیقات کیلئے پولیس کی خصوصی ٹیم تشکیل

گجرات میں گردہ فروخت ریاکٹ بے نقاب تحقیقات کیلئے پولیس کی خصوصی ٹیم تشکیل

آنند( گجرات )۔/15 مارچ، ( سیاست ڈاٹ کام ) گجرات میں ضلع آنند کے کم از کم 5نوجوانوں نے یہ دعویٰ کیا ہے کہ وہ غیر قانونی گردے فروخت کرنے والی ٹولی کا شکار ہوگئے ہیں، جس کے انکشاف پر پولیس نے تحقیقات کیلئے ایک خصوصی ٹیم تشکیل دی۔ پولیس نے بتایا کہ موضع پنڈولی کے نوجوانوں نے یہ شکایت کی ہے کہ مختلف مواقع پر انہیں بے ہوش کرکے آپریشن کے ذریعہ گردے نکال لئے گئے۔ گردہ ریاکٹ کا پردہ فاش ہونے کے بعد پولیس سپرنٹنڈنٹ اشوک کمار یادو نے ایک خصوصی ٹیم متاثرہ نوجوانوں کا بیان ریکارڈ کرنے کیلئے موضع پنڈولی روانہ کردی ہے۔ انہوں نے کہا کہ متاثرہ نوجوانوں کے دعویٰ کی تصدیق کیلئے میڈیکل چیک اپ بھی کروایا جائیگا جس کے بعد ہی ایف آئی آر درج کیا جائے گا۔ انہوں نے بتایا کہ اس معاملہ کی گہرائی تک تحقیقات کیلئے اسپیشل انوسٹی گیشن ٹیم بھی تشکیل دی جائے گی۔ ڈپٹی سپرنٹنڈنٹ پولیسپنیالڈ مسٹر ایم آر گپتا نے بتایا کہ ان نوجوانوں کا دعویٰ ہے کہ ان کے گردوں کو غیر قانونی طریقہ سے نکال لیا گیا اور ایک ٹولی نے ضرورتمندوں کو فروخت کردیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ان نوجوانوں کے پیٹ پر نشانات پائے گئے جس سے یہ ظاہر ہوتا ہے کہ آپریشن کے ذریعہ ان کے گردے نکال لئے گئے۔ بتایا جاتا ہے کہ رفیق نام کا ایک شخص اور دوسروں نے ان کے ساتھ چلنے پر بھاری رقم کا لالچ دیا ۔ اگرچیکہ یہ ریاکٹ گزشتہ 15سال سے چلایا جارہا تھا، لیکن متاثرین کسی مصیبت میں پھنسنا نہیں چاہتے تھے۔

TOPPOPULARRECENT