Thursday , December 14 2017
Home / سیاسیات / گجرات چناؤ جیتنے بی جے پی غیر قانونی طریقوںپر عمل پیرا

گجرات چناؤ جیتنے بی جے پی غیر قانونی طریقوںپر عمل پیرا

نئی دہلی23اکتوبر (سیاست ڈاٹ کام ) کانگریس نے بھارتیہ جنتا پارٹی اور وزیر اعظم نریندر مودی پر گجرات میں اسمبلی انتخابات جیتنے کے لئے ’’غیر قانونی کام‘‘کرنے کا الزام لگاتے ہوئے آج کہا کہ عوام کا بی جے پی سے اعتماد اٹھ گیا ہے ۔کانگریس ترجمان منیش تیواری نے یہاں پارٹی ہیڈکوارٹر میں خصوصی پریس بریفنگ میں کہا کہ بی جے پی پیسہ اور طاقت کے بل پر گجرات اسمبلی الیکشن جیتنے کی کوششوں میں ہے ۔ اس کے لئے وہ حزب اختلاف کی جماعتوں میں نقب لگانے کی کوشش کر رہی ہے ۔گجرات میں پاٹیدار تحریک کے ایک لیڈر نے الزام لگایا ہے کہ بی جے پی نے پارٹی میں شامل ہونے کے لئے انہیں ایک کروڑ روپے کی پیشکش کی ہے ۔انہوں نے کہا کہ اس سے واضح ہوتا ہے کہ بی جے پی انتخابات میں اترنے سے ابھی ڈر رہی ہے ۔ لہذا انتخابات کے نتائج کو تبدیل کرنے کے لئے غیر قانونی طریقے اختیار کئے جارہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ بی جے پی پہلے بھی انتخابات میں غیر قانونی سرگرمیوں کو انجام دیتی رہی ہے ۔حال میں ہی راجیہ سبھا انتخابات میں پارٹی کے سینئر لیڈر احمد پٹیل کے معاملے میں یہ ثابت ہو چکا ہے ۔انہوں نے الزام لگایا کہ بی جے پی نے اس وقت بھی پیسے اور قوت کا استعمال کیا تھا۔کانگریس نے زور دے کر کہا کہ گجرات میں ’’زعفرانی لہر ‘‘ نہیں چل رہی ہے اور لوگ بی جے پی کی مخالفت کر رہے ہیں۔ یہی وجہ ہے کہ بی جے پی انتخابی میدان میں اترنے سے خوف زدہ ہے۔ انہوں نے الزام لگایا کہ بی جے پی نے اپوزیشن جماعتوں کے لوگوں کو پریشان کرنے کے لئے محکمہ انکم ٹیکس سمیت سرکاری مشینری کا غلط استعمال کر رہی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT