Tuesday , November 21 2017
Home / Top Stories / گرمیت سنگھ کو سزا کے بعد ہریانہ ، پنجاب میں امن بتدریج بحال

گرمیت سنگھ کو سزا کے بعد ہریانہ ، پنجاب میں امن بتدریج بحال

ڈیرہ سچا سودا کے ہیڈکوارٹر والے ٹاؤن سرسا میں کرفیو میں نرمی، جنگ جیسی صورتحال منہ توڑ جواب کی متقاضی:دہلی ہائیکورٹ

چندی گڑھ ۔ 29 اگست (سیاست ڈاٹ کام) ہریانہ اور پنجاب میں آج امن رہا جبکہ سربراہ ڈیرہ سچا سودا گرمیت رام رحیم سنگھ کو اپنی دو بھکتوں کا ریپ کرنے کے جرم میں 20 سال کی سزائے قید سنائی جانے کے ایک روز بعد تشدد سے متاثرہ علاقوں میں معمول کی صورتحال بتدریج بحال ہورہی ہے۔ عہدیداروں نے کہا کہ دونوں ریاستوں میں کہیں سے بھی کوئی ناخوشگوار واقعہ کی اطلاع نہیں ملی۔ سرسا (ہریانہ) میں حکام نے صبح 7 بجے سے کرفیو میں 12 گھنٹے کی نرمی دی کیونکہ اس ضلع میں کہیں کوئی پرتشدد واقعہ پیش نہیں آیا۔ ہریانہ کے دیگر ٹاؤنس سے کرفیو پہلے ہی برخاست کیا جاچکا ہے جہاں اسے لاگو کیا گیا تھا۔ ان ٹاؤنس میں پنچکولہ اور کیتھال شامل ہیں۔ سرسا ٹاؤن وسیع و عریض ڈیرہ ہیڈکوارٹرس کا مقام ہے جہاں اس فرقہ کے بھکت گرمیت کی سزا دہی سے قبل بڑی تعداد میں جمع ہوگئے تھے۔ تاہم زیادہ تر بھکت جو پنجاب، ہریانہ اور دیگر جگہوں سے آئے تھے، نظم و نسق کی جانب سے انہیں وہاں سے نکلنے میں مدد کرنے کے بعد روانہ ہوچکے ہیں۔ پنجاب کے حساس اضلاع بشمول بھٹنڈا اور پٹیالہ اور موگا میں بھی زندگی بتدریج معمول پر آرہی ہے جہاں ڈیرہ بھکتوں کی قابل لحاظ تعداد پائی جاتی ہے۔ تاہم دونوں ریاستوں کو ہنوز ہائی الرٹ کے درجہ پر رکھا گیا ہے تاکہ تشدد یا آتشزنی کے کسی بھی واقعہ کو روکا جاسکے جو گذشتہ جمعہ پنچکولہ میں دیکھنے میں آیا۔

جب سی بی آئی عدالت نے ڈیرہ سربراہ کو مجرم قرار دیا تھا۔ چیف منسٹر ہریانہ منوہر لال کھتر نے عوام بالخصوص ڈیرہ سچا سودا بھکتوں سے اپیل کی ہیکہ اس کیس میں سی بی آئی عدالت کی سنائی گئی سزاء کا احترام کریں اور ریاست میں برقراریٔ امن میں مدد کریں۔ کھتر نے کہا تھا کہ عدالت کے فیصلہ کے بعد ریاست میں امن برقرار رکھنے کیلئے مؤثر انتظامات کئے گئے ہیں۔ کوئی بھی شخص جو لا اینڈ آرڈر کی صورتحال کو بگاڑنے کی کوشش کرے اس کے خلاف سخت کارروائی کی جائے گی۔ گذشتہ روز یہاں منعقدہ اعلیٰ سطحی میٹنگ میں مجموعی صورتحال کا جائزہ بھی لیا گیا۔ چیف منسٹر پنجاب امریندر سنگھ نے گذشتہ روز گورنر وی پی سنگھ بدنور سے ملاقات کرتے ہوئے انہیں لا اینڈ آرڈر کی صورتحال اور ان کی حکومت کی جانب سے اقدامات سے واقف کرایا جو ڈیرہ چیف کو سزا کے تناظر میں لا اینڈ آرڈر کو مفلوج ہونے سے روکنے کیلئے کئے جارہے ہیں۔ دہلی ہائیکورٹ نے پنچ کلہ میں ڈیرہ سچا سودا کے سربراہ رام رحیم سنگھ کو مجرم قرار دینے کے بعد پھوٹ پڑنے والے تشدد پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ جنگ جیسی صورتحال میں اس کا مقابلہ اسی کے مطابق کیا جانا چاہئے۔

جیل میں گرمیت نے رات کا
کھانا نہیں کھایا
روہتک ۔ 29 اگست (سیاست ڈاٹ کام) ڈیرہ سچا سودا گروپ کے مجرم سربراہ گرمیت رام رحیم سنگھ نے روہتک کی سناریا جیل میں کل رات کھانا نہیں کھایا جبکہ اسے اپنی دو بھکتوں کی عصمت ریزی کے جرم میں 20 سال قید کی سزا سنائے جانے کا علم ہوا۔ جیل کے ایک عہدیدار نے آج بتایا کہ 50 سالہ خودساختہ سادھو نے رات کے دوران صرف پانی پر اکتفا کیا اور صبح میں دودھ پیا۔ رام رحیم نے کسی سے بھی بات نہیں کی اور اپنے سیل میں چہل قدمی کرتا رہا۔ ڈیرہ گروپ کے سربراہ کو روہتک کی جیل میں ’اپروول سیل‘ میں رکھا گیا ہے۔

 

TOPPOPULARRECENT