Tuesday , November 21 2017
Home / اضلاع کی خبریں / گستاخ کملیش تیواری کو سخت سزا دینے کامطالبہ

گستاخ کملیش تیواری کو سخت سزا دینے کامطالبہ

کریم نگر میں مفتی محمد ندیم الدین ترجمان تنظیم ائمہ مساجد کا بیان
کریم نگر /13 دسمبر (سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) مرکزی حکومت کا گمراہ کن دوہرا طرز عمل ناقابل برداشت ہوتا جا رہا ہے۔ وزیر اعظم ببانگ دہل بیان دیتے آرہے ہیں کہ ملک بغیر رواداری کے چلنا مشکل ہے، سب کا ساتھ ہوگا تب ہی ملک کی ترقی ممکن ہے اور سب کا ساتھ ہوگا تب ہی سب کا وکاس ممکن ہے۔ دوسری جانب وزیر داخلہ راجناتھ سنگھ یہ کہتے ہیں کہ ہندوستان ساری دنیا میں واحد سب سے بڑا جمہوری ملک ہے، جب کہ پوری منصوبہ بندی کے ساتھ بھگوا دہشت پسند گروہ کو مسلمانوں کے خلاف جس طرح چاہے نفرت انگیز بیان جاری کرنے کی ہر طرح کی آزادی دی گئی ہے۔ آخر یہ کس طرح کا دوغلا پن ہے؟۔ ان خیالات کا اظہار مفتی محمد ندیم الدین ترجمان کل ہند تنظیم ائمہ مساجد نے ایک صحافتی بیان جاری کرتے ہوئے کیا۔ انھوں نے وزیر اعظم مودی کے قول و فعل میں تضاد کی سخت الفاظ میں مذمت کی اور ہندو مہاسبھا کے خود ساختہ کارگزار صدر گستارخ رسول کملیش تیواری کو سخت سزا دینے کا مطالبہ کیا۔ انھوں نے کہا کہ زبان درازی کرنے والے تیواری کو سخت سزا دی جانی چاہئے، تاکہ اس طرح کی سوچ و فکر رکھنے والوں کو عبرت حاصل ہوسکے۔ انھوں نے کہا کہ اس ملک میں مسلمانوں نے ہمیشہ دیگر مذاہب کے رہنماؤں اور پیشواؤں کا احترام کیا ہے۔ تین سال قبل بھگوت گیتا پر ایشیا کی ایک عدالت کی جانب سے پابندی لگانے پر پارلیمنٹ میں زبردست احتجاج کیا گیا تھا، جس میں مسلم ارکان پارلیمنٹ بھی شامل تھے اور اس عدالت کے خلاف سخت کارروائی کا مطالبہ کیا گیا تھا۔ انھوں نے کہا کہ کملیش تیواری کو صرف جیل بھیجنے سے اس کا جرم کم نہیں ہوگا، ایسے مجرم کو پھانسی دی جانی چاہئے۔ انھوں نے کہا کہ مسلمان سب کچھ برداشت کرسکتے ہیں، لیکن اپنے رسول کی شان میں کسی طرح کی توہین ہرگز نہیں برداشت کرسکتے۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT