Thursday , December 14 2017
Home / اضلاع کی خبریں / گلبرگہ کو سہولتوں سے محروم کردینے کی مذمت

گلبرگہ کو سہولتوں سے محروم کردینے کی مذمت

مرکزی ریلوے حکام پر ایچ کے سی سی آئی کی سخت تنقید
گلبرگہ:/24 اگست ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز ):حیدرآباد کرناٹک چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری (ایچ کے سی سی آئی) نے سنٹرل ریلوے حکام کی جانب سے گلبرگہ کو اے ون ریلوے اسٹیشن کی سہولتیں دیے جانے سے انکار کے فیصلہ کی شدید الفاظ میں مذمت کی ہے۔جب حکام ریل نے گلبرگہ کے تتکال کوٹے کو ہڈگی اور باگل کوٹ کو منتقل کر دیے جانے کا اعلان کیا ہے۔ممبئی میں سنٹرل ریلوے کے زونل اسٹیشن مینجر کو لکھے گئے ایک مکتوب میں جس کی نقل پریس کو دی گئی ہے چیمبر کے سکریٹری مسٹر امر ناتھ پاٹل نے کہا ہے کہ مصدقہ ذرائع سے ملی اطلاع کے بموجب گلبرگہ ریلوے اسٹیشن سے تتکال کوٹے میں کی گئی کمی کے فیصلہ سے گلبرگہ سے محکمہ کو ہونے والی آمدنی سے محروم کردینے کا ایک اوچھا اقدام ہے۔انھوںنے کہا کہ گلبرگہ ریلوے اسٹیشن ملک کے قدیم ترین ریلوے اسٹیشنوں میں سے ایک ہے اور علاقہ حیدرآباد کرناٹک کے درمیان واقع ہے جہاں سے اس سارے خطہ کے لوگ یا آجا سکتے ہیں یا یہاں سے گزرتے ہیں۔یہ شہر بڑے شہروں بشمول چنئی،ممبئی،حیدرآباد اور بنگلور کے مابین ایک پل کا کام کرتا ہے۔جہاں تک ایچ کے سی سی آٗی کو معلوم ہواہے گلبرگہ ریلوے اسٹیشن کے تتکال کوٹے کو بڑے پیمانے پر کم کر دیا گیاہے اور اس تخفیف شدہ کوٹے کو ہڈٹگی اور باگل کوٹ منتقل کر دیا گیا ہے۔مسٹر پاٹل نے زونل مینجر سے اپیل کی ہے کہ وہ اپنے فیصلہ پر نظر ثانی کریں اور گلبرگہ کو تتکال کوٹے کے اعداد و شمار بحال کردیں تا کہ اس علاقے کے مسافروں کو کسی قسم کی کوئی مشکل لاحق نہ ہوسکے۔انھوںنے کہا کہ گلبرگہ ریلوے اسٹیشن کے لیے ریلوے پٹ ورک جسے اس وقت کے مرکزی وزیر ریلوے ملیکارجن کھرگے نے منظور کیا تھا اس مرتبہ ضرور بہ ضرور مکمل کر لیا جانا چاہیے۔جب کہ محکمہ نے اس بات کا تیقن دیا تھا کہ زیر التوا کام 2015جون تک مکمل کر لیا جائے گا مگر اس سلسلے میں کسی قسم کی کوئی پیش رفت نہ ہوسکی ہے جو افسوس ناک بات ہے۔اس پراجکٹ میں ہورہی تاخیر گلبرگہ سے کسی نئی ٹرین کو شروع کرنے کے امکانات کو معدوم کر رہی ہے ۔محض پٹ لائن کام کے التوا میں رہنے سے حیدرآباد گلبرگہ کے لیے چلائی جانے والی یومیہ ٹرین جس کی منظوری مل سکی ہے اب تک شروع نہیں کی جاسکی ہے۔چیمبر نے اپیل کی ہیک ہ گلبرگہ ریلیو اسٹیشن اور پٹ لائن کے زیر التوا کاموں کو جنگی بنیادوں پر مکمل کر لیا جائے اور گلبرگہ سے منظور شدہ نئی ٹرینوں کو شروع کرنے کے لیے جلد از جلد کوششیں کی جائیں۔

TOPPOPULARRECENT