Saturday , November 18 2017
Home / جرائم و حادثات / گلوکارہ مدھوپریہ اور شوہر کی کونسلنگ ‘میرا شوہر اچھا ہے ۔ جہیز ہراسانی شکایت کا نیا موڑ

گلوکارہ مدھوپریہ اور شوہر کی کونسلنگ ‘میرا شوہر اچھا ہے ۔ جہیز ہراسانی شکایت کا نیا موڑ

حیدرآباد ۔ /13 مارچ (سیاست نیوز) تلگو گلوکارہ مدھو پریہ نے اپنے شوہر سریکانت کے خلاف  ہمایوں نگر پولیس اسٹیشن میں جہیز ہراسانی سے متعلق درج کی گئی شکایت آج نیا موڑ اختیار کرگئی ۔ بتایا جاتا ہے کہ ہمایوں نگر پولیس نے گلوکارہ اور اس کے شوہر کی پہلی کونلسنگ کی جس میں مدھو پریہ نے اپنے شوہر کو بہترین ساتھی قرار دیا ۔ 6 گھنٹوں تک کی گئی اس کونسلنگ کے بعد مدھو پریہ نے اپنے تاثرات بیان کرتے ہوئے بتایا کہ اس کے شوہر کی ایک اور کونسلنگ کی جائے گی جس کے بعد وہ اپنی ازدواجی زندگی سے متعلق قطعی فیصلہ کریں گے ۔ والدین کی مرضی کے بغیر ان کی چھ ماہ قبل شادی ہوئی تھی واضح رہے کہ کل تلگو گلوکارہ نے ہمایوں نگر پولیس اسٹیشن میں اپنے شوہر سریکانت کے خلاف ہراسانی کی شکایت درج کروائی تھی جس میں بتایا کہ اسے سریکانت کی جانب سے اذیتیں دی جارہی ہیں اور اسے ہراساں کیا جارہا ہے ۔ پولیس نے مقدمہ درج کرنے سے قبل گلوکارہ اور اس کے شوہر کو کونسلنگ کیلئے آج طلب کیا تھا جس میں انسپکٹر ہمایوں نگر مسٹر ٹی رویندر نے دونوں کی کونسلنگ کی ۔ قبل ازیں کل رات مدھو پریہ کے رشتہ داروں نے سریکانت پر اس کے مکان پہونچ کر مبینہ طور پر حملہ کیا جس کے نتیجہ میں بنجارہ ہلز پولیس اسٹیشن میں ایک شکایت درج کروائی تھی لیکن آج ایک اورغلط شناخت کا انوکھا واقعہ پیش آیا جس میں رامنتا پور کے ساکن 24 سالہ محمد نعیم نے اوپل پولیس اسٹیشن پہونچ کر مدھو پریہ کے والد ، بھائی اور دیگر رشتہ داروں کے خلاف اسے شدید طور پر زدوکوب کرنے کی شکایت درج کروائی ۔ نعیم نے اپنے بیان میں بتایا کہ 14 افراد جو خود کو مدھو پریہ کے رشتہ دار ہونے کا دعویٰ کرتے ہوئے اس پر اس وقت حملہ کردیا جب وہ رامنتاپور علاقہ میں میڈیکل شاپ سے ادویات لانے کی غرض سے گیا ہوا تھا ۔مدھو پریہ کے رشتہ داروں نے داماد کے شبہ میں مسلم نوجوان پر حملہ کیا ۔ اوپل پولیس نے نوجوان کی شکایت قبول کرنے سے پہلے انکار کردیا اور بعد ازاں میڈیا کے دباؤ کے نتیجہ میں ایک مقدمہ درج کیا گیا ہے ۔

TOPPOPULARRECENT