گورنر پر کانگریس کی تنقیدیں ٹی آر ایس وزیر کی طرح عمل ‘ پونم پربھاکر

گورنر نظام کو ختم کردینے پر زور ۔ سروے ستیہ نارائنا
حیدرآباد ۔ 6 ۔ جنوری : ( سیاست نیوز ) : گورنر کے خلاف کانگریس نے اپنی تنقیدوں میں شدت پیدا کردی ۔ سابق رکن پارلیمنٹ پونم پربھاکر نے ٹی آر ایس کے وزیر کی طرح خدمات انجام دینے کا الزام عائد کیا تو سابق مرکزی وزیر سروے ستیہ نارائنا نے گورنر نظام کو برخاست کردینے کا مطالبہ کیا ۔ سابق ایم پی پونم پربھاکر نے گورنر نرسمہن کی جانب سے حکومت پر تنقید نہ کرنے اور ٹی آر ایس حکومت سے تعاون کرنے کا کانگریس قائدین کو مشورہ دینے پر حیرت کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ کانگریس کو اپنی ذمہ داری کا احساس ہے ۔ دستوری عہدے کا احترام کرکے پارٹی عوامی مسائل پر گورنر کو یادداشت پیش کرنے کی کوشش کی ۔ مگر افسوس کے ساتھ کہنا پڑتا ہے کہ نرسمہن گورنر کی بجائے ٹی آر ایس حکومت کے وزیر کی طرح خدمات انجام دے رہے ہیں ۔ سابق وزیر سروے ستیہ نارائنا نے آج چنچل گوڑہ جیل پہونچکر ایم آر پی ایس بانی صدر ایم کرشنا مادیگا سے ملاقات کی ۔ بعد ازاں میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا کہ گورنر کا رویہ انتہائی تکلیف دہ ہے ۔ چیف منسٹر کے سی آر ہٹلر اور گورنر ہیڈ ماسٹر کی طرح کام کررہے ہیں ۔ سروے ستیہ نارائنا نے کہا کہ کانگریس قائدین ریت مافیا کی غیر قانونی سرگرمیوں اور کرشنا مادیگا کی گرفتاری کے خلاف یادداشت پیش کرنے راج بھون پہونچے تھے لیکن گورنر حکومت اور چیف منسٹر و انکے فرزند کے ٹی آر کے خلاف ایک لفظ سننے کو تیار نہیں ہیں ۔ الٹا ہیڈ ماسٹر کی طرح ہمیں حکومت سے تعاون کا مشورہ دے رہے ہیں ۔ گورنر کے رویے سے دستوری عہدے پر عوام کا اعتماد ختم ہورہا ہے ۔ بہتر ہوگا عوام کے مفادات کا تحفظ کرنے میں ناکام رہنے والے گورنر نظام کو برخاست کردیا جائے ۔

TOPPOPULARRECENT