Saturday , September 22 2018
Home / شہر کی خبریں / گھانسی بازار میں نواب میر ذوالفقار الدولہ کی دیوڑھی کے انہدام پر تہہ خانہ برآمد

گھانسی بازار میں نواب میر ذوالفقار الدولہ کی دیوڑھی کے انہدام پر تہہ خانہ برآمد

تعمیراتی کام کو فوری مسدود کرنے کا مطالبہ ، ایم ویدا کمار صدر نشین فورم فار بیٹر حیدرآباد کا دورہ

تعمیراتی کام کو فوری مسدود کرنے کا مطالبہ ، ایم ویدا کمار صدر نشین فورم فار بیٹر حیدرآباد کا دورہ
حیدرآباد۔13اپریل(سیاست نیوز) گھانسی بازار میں نواب میر ذوالفقار الدولہ کی قدیم دیوڑھی کی انہدامی کاروائی کے دوران تہہ خانہ کے آثار کو مہندم کرنے کی اطلاع ملنے پر فورم فار بیٹر حیدرآباد کے وفد نے مذکورہ مقام کا معائنہ کیا اور تعمیری سرگرمیو ںکو روکتے ہوئے اے ایس آئی کو اس کی اطلاع فراہم کرنے اور اے ایس آئی کی رپورٹ کے بعد ہی وہاں پر پولیس کوارٹرس کی تعمیر انجام دینے کا حکومت سے مطالبہ کیا۔مسٹر ویدا کمار نے دوران معائنہ میڈیا کو بتایا کہ شہر حیدرآباد کو قطب شاہی اور آصفجاہی دور حکمرانی فن تعمیر کا مرکز قرارد یا۔ انہوں نے کہاکہ سپریم کورٹ نے اس ضمن میں واضح احکامات جاری کرتے ہوئے چارمینار کے اطراف واکناف میںکسی بھی قسم کی تعمیرات (خواہ وہ خانگی ہوں یا پھر سرکاری )کے دوران رونما ء ہونے والے آثار کے متعلق فوری طور پر ریاستی محکمہ آثار قدیمہ اور بعد ازاں مرکزی آثار قدیمہ کو اطلاع فراہم کرنے کی ہدایت دی ہے باوجود اسکے گھانسی بازار میں پولیس کوارٹرس کی تعمیر کے نام پر دیوڑھی نواب میر ذوالفقار الدولہ کی کھدوائی کے دوران برآمد زیر زمین تہہ خانہ کو مہندم کرنے کا واقعہ نہایت بدبختانہ ہے۔ مسٹر ویدا کمار نے کہاکہ تلنگانہ کے تاریخی عمارتوں اور آثار کا تحفظ ریاستی حکومت کی ذمہ داری ہے اس میں کسی بھی قسم کی کوتاہی کو فورم فار بیٹر حیدرآباد ہر گز برداشت نہیںکریگا۔ انہوں نے پولیس کی جانب سے مقام واقعہ کا معائنہ کرنے سے روکنے پر برہمی کا اظہار کیا۔ مقام واقعہ پر متعین پولیس عملے اور اس کی نگرانی کررہے ایس آئی مسٹر یادگیری کے رویہ پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہاکہ تلنگانہ تحریک کا بنیادی مقصد علاقہ تلنگانہ کی تہذیب وتمدن کو تحفظ فراہم کرنا ہے انہوں نے کہاکہ آندھرائی حکمرانوں اور سرمایہ داروں نے تلنگانہ کی تہذیب و تمدن کا ساتھ زبردست کھلواڑکیا جس کے خلاف علیحدہ تلنگانہ جہدکاروں نے محاذ کھلوتے ہوئے علیحدہ ریاست تلنگانہ کے مطالبہ پر ایک بڑی تحریک چلائی اور ریاست تلنگانہ کی تشکیل کو یقینی بنانے کا کام کیا ہے ۔مسٹر ویدا کمار نے کہاکہ علیحدہ ریاست تلنگانہ میں تاریخی عمارتوں اور آثار کے ساتھ کسی بھی قسم کے کھلواڑ کو ہرگز برداشت نہیں کیاجائے گا۔انہوں نے دیوڑھی نواب میر ذوالفقار الدولہ کی کھدوائی کے دوران زیر زمین پائے جانے والے تہہ خانے کی اے ایس آئی محکمہ سے جانچ کروانے کا مطالبہ کیا تاکہ ہمارے قیمتی اثاثو ں کے تحفظ کو یقینی بنایا جاسکے ۔ مسٹر ویدا کمار نے اس ضمن میں پولیس کمشنر ‘ ڈپٹی کمشنر ساوتھ زون سے بھی بات کی اور کہاکہ اسٹیٹ اے ایس آئی سے مقام واقعہ کی تحقیقات تک مقام واقعہ پر تعمیری سرگرمیوں کو روک لگائی جائے۔

TOPPOPULARRECENT