Thursday , September 20 2018
Home / ہندوستان / گھمسان کی لڑائی میں 3 خاتون نکسلائٹس ہلاک

گھمسان کی لڑائی میں 3 خاتون نکسلائٹس ہلاک

رائے پور 8 اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) چھتیس گڑھ کے شورش زدہ علاقہ بیجاپور ڈسٹرکٹ میں سکیوریٹی فورسیس کے ساتھ ایک گھمسان کی لڑائی میں تین خاتون نکسلائٹس ہلاک ہوگئیں۔ دریں اثناء بیجاپور ایڈیشنل سپرنٹنڈنٹ آف پولیس اندرا کلیان ایلیسلا نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ گھمسان کی لڑائی جنگلا پولیس اسٹیشن کے تحت کے جنگلات میں اُس وقت ہوئی

رائے پور 8 اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) چھتیس گڑھ کے شورش زدہ علاقہ بیجاپور ڈسٹرکٹ میں سکیوریٹی فورسیس کے ساتھ ایک گھمسان کی لڑائی میں تین خاتون نکسلائٹس ہلاک ہوگئیں۔ دریں اثناء بیجاپور ایڈیشنل سپرنٹنڈنٹ آف پولیس اندرا کلیان ایلیسلا نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ گھمسان کی لڑائی جنگلا پولیس اسٹیشن کے تحت کے جنگلات میں اُس وقت ہوئی جب ضلعی فورس اور سی آر پی ایف کی مشترکہ جمعیت نکسلائٹس کی تلاش میں سرگرداں تھی۔ جب وہ پوٹینر کی جنگلات کے قریب پہنچے تو اچانک مسلح افراد کے ایک گروپ نے اُن پر فائرنگ شروع کردی لیکن سکیورٹی فورسیس کی جانب سے کی گئی جوابی فائرنگ کی تاب نہ لاتے ہوئے نکسلائٹس وہاں سے فرار ہونے پر مجبور ہوگئے۔ بعدازاں جب لڑائی کے مقام کی سکیورٹی فورسیس نے ناکہ بندی کی تو وہاں تین خواتین کی نعشیں ملیں جو یقینا نکسلائٹس رہی ہوں گی۔ وہاں بکھرے ہوئے خون سے یہ معلوم میں دیر نہیں لگی کہ گھمسان کی لڑائی میں مزید کچھ نکسلائٹس یا تو ہلاک ہوئے ہیں یا زخمی۔ مہلوک خاتون نکسلائٹس کی شناخت اُسی وقت ممکن ہوسکے گی جب سکیورٹی فورسیس کی گشت کرنے والی پارٹی اپنے کیمپ پہونچے گی۔

بم دھماکہ : ملزم کے زیراستعمال دو مکانات کی نشاندہی
بردوان 8 اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) بردوان دھماکے میں ملزمین نے جن مکانات کا استعمال کیا تھا اُس میں سے مزید دو مکانات کی بھی نشاندہی ہوئی ہے جو 2 اکٹوبر کھگرا گڑھ کے مکان سے ہوئے دھماکے کے مقام سے کچھ فاصلے پر واقع ہے جہاں 2 اکٹوبر کو دھماکے ہوئے تھے۔ پولیس سپرنٹنڈنٹ ایس ایم ایچ مرزا نے بتایا کہ دو مکانات موقوعہ بابور باغ اور بادشاہی لاؤں کا موبائیل ٹاور کے محل وقوع کی مدد سے پتہ چل گیا۔ تحقیقات کرنے والوں کا خیال ہے کہ مندرجہ بالا دو مکانات میں سے ایک مکان میں دھماکہ کرنے والا مشتبہ ملزم کوثر رہا کرتا تھا۔

TOPPOPULARRECENT