Saturday , December 15 2018

گیل پائپ لائن میں ہولناک آتشزدگی، بڑا سانحہ ٹل گیا

نئی دہلی /16 جنوری (سیاست ڈاٹ کام) آج صبح ایک بڑا سانحہ ٹل گیا، جب کہ قدرتی گیس کی پائپ لائن گیل میں ہولناک آگ بھڑک اٹھی، جب کہ تعمیراتی ٹھیکہ داروں نے اس میں شگاف کیا تھا۔ آگ بھڑک اٹھنے سے ایک شخص معمولی سا زخمی ہوا، جب کہ چار کاریں جل کر خاکستر ہو گئیں۔ پائپ لائن سے آگ زور و شور سے خارج ہو رہی تھی۔ یہ واقعہ 9-45 بجے صبح وینکٹیشورا کالج کے

نئی دہلی /16 جنوری (سیاست ڈاٹ کام) آج صبح ایک بڑا سانحہ ٹل گیا، جب کہ قدرتی گیس کی پائپ لائن گیل میں ہولناک آگ بھڑک اٹھی، جب کہ تعمیراتی ٹھیکہ داروں نے اس میں شگاف کیا تھا۔ آگ بھڑک اٹھنے سے ایک شخص معمولی سا زخمی ہوا، جب کہ چار کاریں جل کر خاکستر ہو گئیں۔ پائپ لائن سے آگ زور و شور سے خارج ہو رہی تھی۔ یہ واقعہ 9-45 بجے صبح وینکٹیشورا کالج کے قریب پیش آیا۔ 12 فائر انجن گیارہ بجے دن تک آگ پر قابو پانے میں کامیاب ہوئے۔ ایک آٹو رکشا کا ڈرائیور جو حادثہ کے وقت یہاں سے گزر رہا تھا، اس کا چہرہ اور پیٹ جھلس گیا۔ اسے ابتدائی طبی امداد کے بعد دوا خانہ سے ڈسچارج کردیا گیا۔ اس علاقہ میں موجود تمام کاروں کا تخلیہ کروادیا گیا۔ یہ علاقہ گنجان آباد رہائشی علاقہ ہے، جہاں فلک بوس تجارتی مراکز قائم ہیں۔ فوج، آتش فرو عملہ، پولیس اور گیل کے عملہ کی جدوجہد سے آگ پر قابو پایا جاسکا۔ ڈسٹرکٹ کمشنر نئی دہلی نے کہا کہ ان تمام سرکاری ملازمین نے زبردست جانی و مالی نقصان سے لوگوں کو بچالیا۔ بعض بوڑھے افراد دوسری اور تیسری منزلوں پر پھنسے ہوئے تھے، انھیں بھی فوجیوں نے بچالیا۔ فوجیوں نے تمام قریبی مکانوں سے دھماکو اشیاء جیسے گیس کے سیلنڈرس ہٹا دیئے تھے، تاکہ دھماکہ نہ ہوسکے۔ فوجیوں نے قریبی مکانوں سے بھی بکٹیں (بالٹیاں) حاصل کیں، تاکہ دستیاب پانی سے آگ بجھائی جاسکے۔ اس وقت تک فائر انجن بھی پہنچ گئے تھے۔ اس حادثہ کے بعد پولیس نے ٹریفک کا رخ موتی باغ سے رام تلا مارگ اور شانتی پتھ کی جانب موڑ دیا۔ اونچی راہداریوں کی تعمیر کے لئے ہندوستانی تعمیراتی کمپنی کے ٹھیکہ داروں اور کارکنوں نے گیل کمپنی کی زیر زمین پائپ لائن میں ڈریل مشین سے شگاف کردیا تھا، جس کی وجہ سے آگ بھڑک اٹھی۔ بعد ازاں گیل کمپنی نے کہا کہ یہ کارروائی ان کی اجازت کے بغیر کی گئی تھی، حالانکہ پائپ لائن کے اطراف انتباہی باڑ بھی لگائی گئی تھی۔ گیس کی سربراہی جلد از جلد بحال کرنے کی کوشش جاری ہے۔

TOPPOPULARRECENT