Thursday , November 23 2017
Home / Top Stories / ہر خاندان میں ایک فرد کو روزگار : آسام میں کانگریس کا وعدہ

ہر خاندان میں ایک فرد کو روزگار : آسام میں کانگریس کا وعدہ

چائے کے کسانوں کیلئے خصوصی پیکج ء اساتذہ کی جائیدادوں پر تقررات : پارٹی منشور کی اجرائی
گوہاٹی 24 مارچ ( سیاست ڈآٹ کام ) آسام میں ہر خاندان کے ایک رکن کو سرکاری ملازمت فراہم کی جائیگی اگر ریاست میں کانگریس پارٹی کو دوبارہ اقتدار حاصل ہوتا ہے ۔ کانگریس نے ریاست میں اپنے انتخابی منشور میں آج یہ وعدہ کیا ہے ۔ پارٹی کا منشور جاری کرتے ہوئے چیف منسٹر ترون گوگوئی نے کہا کہ اگر وہ دوبارہ برسر اقتدار آتے ہیں تو وہ اس بات کو یقینی بنائیں گے کہ ہر خاندان میں ایک فرد کو روزگار حاصل ہو ۔ انہوں نے کہا کہ ہمارا نشانہ ہے کہ سرکاری اور خانگی دونوں ہی شعبہ جات میں آئندہ پانچ سال میں دس لاکھ روزگار فراہم کئے جائیں۔ اس منشور میں وعدہ کیا گیا ہے کہ جن خاندانوں کی سالانہ آمدنی 2.5 لاکھ روپئے سے کم ہے ان کو غریب خاندان قرار دیا جائیگا اور اسی مناسبت سے انہیں فوائد پہونچائے جائیں گے ۔ منشور میں کہا گیا ہے کہ اگر کانگریس پارٹی اقتدار میں آجاتی ہے تو اسکولس میں تمام خالی جائیدادوں کو پر کیا جائیگا اور آئندہ پانچ سال کے دوران اس طرح کی دو لاکھ جائیدادیں پیدا کی جائیں گی ۔ منشور میں وعدہ کیا گیا ہے کہ چھوٹے چائے کے کسانوں کو خصوصی پیکج فراہم کیا جائیگا ۔ کونسلوں کی ترقی کیلئے 2,000 کروڑ روپئے کا خصوصی پیکج ہوگا ۔ ایک ہزار کروڑ روپئے ہر ہل و بارک والی اضلاع کو دئے جائیں گے ۔ کہا گیا ہے کہ ہر مجولی جزیرہ کو 500 کروڑ روپئے کا پیکج دیا جائیگا ۔ جو لوگ چار جزیروں میں رہتے ہیں انہیں کانگریس حکومت کی جانب سے 1,500 کروڑ روپئے کا پیکج دیا جائیگا ۔ پارٹی نے وعدہ کیا ہے کہ تمام سرکاری سبسڈی سپلائی اسٹورس سے شکر بھی فراہم کی جائیگی ۔ برہمپترا ندی کے بتدریج ختم ہونے کے تعلق سے منشور میں کہا گیا ہے کہ جہاں جہاں ندی ختم ہوگئی ہے اسے بحال کرنے اقدامات کئے جائیں گے ۔ کہا گیا ہے کہ دھیماجی اور بونگائی گاوںمیں ایک زرعی یونیورسٹی قائم کی جائیگی ۔ بارک ویلی کیلئے ایک منی سیکریٹریٹ قائم کیا جائیگا ۔

TOPPOPULARRECENT