Monday , June 25 2018
Home / شہر کی خبریں / ہم ناراض ہیں لیکن غدار نہیں ہیں : گجراتی

ہم ناراض ہیں لیکن غدار نہیں ہیں : گجراتی

تجارت کو فائدہ بخش بنانے کے لیے منصوبہ بندی پر زور ، بی جے پی کو پھر ایک مرتبہ کامیاب بنانے کی مساعی
حیدرآباد۔11ڈسمبر(سیاست نیوز) ’ہم ناراض ہیں لیکن غدار نہیں ‘ ہمیں آج کے نقصان سے زیادہ مستقبل کے فائدہ کے متعلق منصوبہ بندی کرنی ہے۔’آمے گجراتیو چھے‘ انے گجرات نا رکت ما ویاپار چھے‘ (ہم گجراتی ہیں اور گجرات کے خون میں تجارت ہے) گجراتی کوئی ایسا کام نہیں کرے گا جس کے سبب اسے تجارتی نقصان کا سامنا کرنا پڑے ۔ملک کے حصص بازار میں گجراتیوں کی سرمایہ کاری اور ان کے تحفظ کیلئے گجرات میں بھارتیہ جنتا پارٹی کی کامیابی کو یقینی بنانا ناگزیر ہے اور اس منصوبہ کو عملی جامہ پہنانے کے لئے یہ ضروری ہے کہ گجرات میں بھارتیہ جنتا پارٹی کی کامیابی کو ممکن بنایا جائے۔عام طور پر حصص بازار میں برسراقتدار جماعت کو شکست کے ساتھ ہی گراوٹ ریکارڈ کی جاتی ہے اور یہ گراوٹ عارضی ہوتی ہے لیکن گراوٹ کے ساتھ ہی کروڑہا روپئے کا نقصان بازار کو اور سرمایہ کاروں کو برداشت کرنا پڑتا ہے۔بی جے پی گجرات میں کامیابی کے لئے اب حصص بازار کے حالات اور ملک کی موجودہ معیشت کا تذکرہ کرنا شروع کرچکی ہے اورشہری علاقوں میں ہونے والی 14 ڈسمبر کو دوسرے مرحلہ کی رائے دہی میں سرمایہ کاروں اور حصص بازار سے وابستہ لوگوں کی بڑی تعداد کو مد نظر رکھتے ہوئے اس پیغام کو عام کیا جا رہاہے کہ گجراتی تاجر ہوتا ہے اور تجارت اس کے خون میں ہے اسی لئے وہ اپنے تجارتی مفادات کو نقصان نہیں پہنچائیں گے۔بھارتیہ جنتا پارٹی کی جانب سے حصص بازار میں گراوٹ کی اطلاعات گشت کروائی جانے لگی ہیں تاکہ شہری علاقوں کے سرمایہ کار جو بازار پر انحصار کئے ہوئے ہوتے ہیں ان میں خوف پیدا ہو۔معاشی ماہرین یہ واضح کرچکے ہیں کہ اگر انتخابی نتائج کے فوری بعد اگرBSE اورNIFTYمیں گراوٹ ریکارڈ کی جاتی ہے تو وہ عارضی ہوگی اور اندرون چند یوم اس گراوٹ پر قابو پایا جاسکتا ہے لیکن یہ سچ ہے کہ اس کا بھاری نقصان بھی ہوگا۔

TOPPOPULARRECENT