Saturday , November 25 2017
Home / Top Stories / ہند، پاک کا بین الاقوامی سرحد پر مورٹار فائر روکنے کا فیصلہ

ہند، پاک کا بین الاقوامی سرحد پر مورٹار فائر روکنے کا فیصلہ

NEW DELHI, SEP 11 (UNI):- BSF Director General D K Pathak and DG Pakistan Rangers (Punjab) Maj Gen Umar Farooq Burki (R) during the signing of joint record of discussions at the conclusion of their biannual meeting in New Delhi on Saturday. UNI PHOTO-51U

بارڈر سکیورٹی فورس اور پاک رینجرز کے درمیان ڈی جی سطح کی سہ روزہ بات چیت کا اختتام ۔ سرکاری ریکارڈ پر دستخط

نئی دہلی ، 12 سپٹمبر (سیاست ڈاٹ کام) سرحد پر اَمن قائم کرنے کی کوششوںکے تحت ہندوستان اور پاکستان نے آج فیصلہ کیا کہ جموں و کشمیر میں بین الاقوامی سرحد (آئی بی) کے پاس مورٹار شلوں کی فائرنگ پر مکمل امتناع عائد کیا جائے، جو کئی شہریوں کی جانیں لے چکی اور اُن کے مکانات کو نقصان پہنچائی ہے۔ دونوں فریقوں نے یہ بھی اتفاق کیا کہ حساس مسائل کی مشترکہ طور پر یکسوئی کی جائے، جیسے فائربندی کی خلاف ورزیاں اور سرحد پار سے دراندازی۔ اس معاملے میں معلومات کا بروقت تبادلہ کیا جائے گا جس میں ذریعے ای میل اور ٹیلی فون شامل ہے۔ بارڈر سکیورٹی فورس اور پاک رینجرز کے درمیان یہاں سہ روزہ ڈی جی سطح کی بات چیت کے اختتام پر دونوں فریقوں نے غوروخوض کے 20 نکاتی جوائنٹ ریکارڈ پر دستخط کئے جس کی مستقبل میں تعمیل ہوگی۔ بی ایس ایف ڈائریکٹر جنرل دیویندر کمار پاٹھک اور پاک رینجرز ڈی جی (پنجاب) میجر جنرل عمر فاروق برکی نے یہاں بی ایس ایف کے ہیڈکوارٹرز میں آج دوپہر بات چیت کے سرکاری ریکارڈ پر دستخط کئے جبکہ اُن کی بات چیت کا اختتام عمل میں آیا جو لگ بھگ دو سالہ وقفے کے بعد منعقد ہوئی کیونکہ دونوں ملکوں کے درمیان تعلقات سرحد پر متعدد مسائل کے سبب کشیدہ ہوچلے تھے۔

ذرائع نے کہا کہ دونوں فریقوں نے فیصلہ کیا ہے کہ وہ امن کے وقتوں میں آئی بی کے پاس مورٹار فائر نہیں کریں گے۔ اس کے ساتھ ہی یہ بھی اتفاق کیا گیا کہ دونوں فورسیس بھاری ہتھیاروں کا استعمال نہیں کریں گے اور اس قسم کے ہتھیار اور گولہ بارود صرف آخری حربہ کے طور پر استعمال کئے جائیں گے۔ انھوں نے کہا کہ دونوں فریقوں نے غور کیا کہ عام شہریوں اور سرحدی آبادی کا فائر کئے گئے مورٹار شلوں کے چمکدار دھاتی ٹکڑوں کی تصاویر کو دکھانا بہت افسوسناک منظر ہے اور اسی لئے اس قسم کی فائرنگ یا جوابی کارروائی پر فی الفور روک لگایا جانا چاہئے۔ مورٹار ایسی توپ ہوتی ہے جو بھاری نقصان پہنچانے والے شل داغتی ہے۔ یہ بات چیت جس کے بارے میں دونوں فریقوں نے کہا کہ ’’پُرجوش اور تعمیری ماحول‘‘ میں منعقد ہوئی، اس کے نتیجے نے ایک اعتماد سازی اقدام (سی بی ایم) کی توثیق بھی کردی کہ اگر کوئی بھی فریق آئی بی کے پاس مشتبہ نقل و حرکت کی نوٹس دے تو وہ احتیاطی طور پر روشنی بکھیرنے والی فائرنگ کرتے ہوئے اپنے ہم منصب کو چوکس کریں گے کہ یہ فائرنگ درانداز کا نشانہ لے کر کی گئی، نہ کہ انھیں نشانہ بنایا گیا۔ دونوں فریقوں نے عہد کیا کہ اس بات چیت کے دوران کئے گئے تحریری وعدوں کا احترام کریں گے۔ دونوں فورسیس نے اس ایقان کا اظہار کیا کہ ان الفاظ کا آنے والے وقتوں میں پاس و لحاظ رکھا جائے گا۔ تاہم پاکستان نے بی ایس ایف کے تجویز کردہ ثقافتی اور کھیل کود کی سرگرمیوں کے دو دیگر اعتماد سازی اقدامات کو فی الحال معرض التوا رکھا ہے۔

TOPPOPULARRECENT