Sunday , May 27 2018
Home / دنیا / ہندوستانی اسٹور ورکر کو عصمت ریزی کے جرم میں سزائے قید

ہندوستانی اسٹور ورکر کو عصمت ریزی کے جرم میں سزائے قید

لندن۔ 14 نومبر (سیاست ڈاٹ کام) ایک 30 سالہ ہندوستانی نژاد اسٹور ورکر کو دوکان میں سیل فون کی بیٹری چارج کرنے آنے والی خاتون کی عصمت ریزی کرنے کے جرم میں 8 سال کی سزائے قید سنائی گئی ہے۔ میڈیا رپورٹ کے مطابق ہندوستانی ورکر سواپنل کلت نے 40 سالہ خاتون کو دوکان کے اندر مقفل کردیا اور بعدازاں اسے نہ صرف تھپڑ رسید کیا بلکہ اس کی عصمت ریزی بھی کی۔ کلت ہندوستان کے شہر ناگپور کا شہری بنایا گیا ہے، جسے مانچسٹر (کراؤن کورٹ) نے 7 سال 8 ماہ کی سزائے قید سنائی ہے کیونکہ اس نے اقبالِ جرم کرلیا تھا۔ سزا کی تکمیل کے بعد اسے ہندوستان واپس بھیج دیا جائے گا۔ دریں اثناء پولیس نے بتایا کہ متاثرہ خاتون 19 مارچ کو اپنے ایک دوست کے گھر جارہی تھی کہ اچانک راستے میں اسے پتہ چلا کہ اس کے سیل فون کی بیٹری ختم ہوچکی ہے اور اسے چارجنگ کی ضرورت ہے۔ راستے میں اس نے مذکورہ اسٹور دیکھا اور اسٹور ورکر سے درخواست کی کہ وہ تھوڑی دیر اس کے فون کو چارج کرنے کی اجازت دے۔ سوانپل نے خاتون کو اجازت دے دی اور تھوڑی دیر بعد دوکان کا دروازہ بند کرکے اس کی عصمت ریزی کی۔ خاتون نے مزاحمت کی لیکن سوانپل نے اسے بری طرح ماراپیٹا۔ گریٹر مانچسٹر پولیس کے ترجمان نے یہ بات بتائی۔ اس طرح اس نے خاتون کو رات بھر ڈرا دھماکر اسٹور میں ہی روکے رکھا اور کئی بار اس کی عصمت ریزی کی اور اگلی صبح اسے چھوڑ دیا۔ خاتون نے وہاں سے نکلتے ہی سب سے پہلے پولیس سے رابطہ قائم کیا۔

TOPPOPULARRECENT