Wednesday , January 17 2018
Home / دنیا / ہندوستانی خاتون کی ہلاکت نسلی حملہ کی وجہ سے نہیں : پولیس چیف

ہندوستانی خاتون کی ہلاکت نسلی حملہ کی وجہ سے نہیں : پولیس چیف

سڈنی ؍ نئی دہلی ۔ 9 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) آسٹریلیائی پولیس نے آج ایک انتہائی اہم بیان دیتے ہوئے کہا کہ ہندوستانی آئی ٹی پروفیشنل خاتون کے قتل کے پس پشت نسلی منافرت کارفرما نہیں ہے۔ دریں اثناء نیوساؤتھ ویلز کے ہومی سائیڈ اسکواڈ کے کمانڈر ڈیٹیکٹو سپرنٹنڈنٹ مائیکل ویلنگ نے سوالیہ انداز میں کہا کہ کیا یہ کوئی عام نوعیت کا واقعہ ہے جو اکثر و بیشتر پیش آتا رہتا ہے؟ اس کے بعد خود انہوں نے ہی مثبت جواب دیتے ہوئے کہا کہ یہ مختلف نوعیت کے پیش آنے والے واقعات میں سے ایک ہے۔ انہوں نے حملہ کے وقت آس پاس موجود افراد سے خواہش کی کہ اگر وہ اس بارے میں کچھ جانتے ہیں تو پولیس کو فوری طور پر مطلع کریں۔ 41 سالہ پربھا ارون کمار کو چاقو گھونپ کر ہلاک کردیا گیا جس کی نیو ساؤتھ ویلز پولیس نے تحقیقات شروع کردی ہے۔ ویسٹ اینڈ میں جس وقت حملہ ہوا اس وقت مقتولہ پربھا فون پر اپنے شوہر سے محو گفتگو تھی جو ہندوستان میں مقیم ہے۔ وزیراعظم نیو ساؤتھ ویلز مائیک بائرڈ نے تیقن دیا کہ حملہ آور کو جلد ہی گرفتار کرلیا جائے گا اور اس کے خلاف سخت کارروائی کی جائے گی۔ آسٹریلیا نے بھی اس سلسلہ میں ہندوستان کو واقف کروایا ہے کہ حملہ کی تحقیقات کا آغاز کردیا گیا ہے اور حملہ آور کا جلد ہی پتہ چل جائے گا۔ دریں اثناء نئی دہلی میں وزارت خارجہ کے ترجمان سید اکبرالدین نے کہا کہ مقتولہ کے شوہر ارون کمار اور آئی ٹی فرم مائنڈٹری کے ایک نمائندہ نے نیو ساؤتھ ویلز پولیس سے ملاقات کی جہاں انہیں بتایا گیا کہ پربھا کے قتل کی تحقیقات کے لئے ایک خصوصی اسکواڈ تشکیل دیا گیا ہے۔

TOPPOPULARRECENT