Tuesday , November 21 2017
Home / Top Stories / ہندوستانی مسلمان متحد ہوجائیں

ہندوستانی مسلمان متحد ہوجائیں

مسلم مجلس مشاورت کے عظیم اشان جلسہ عام میں دانشوران کا خطاب
ممبئی، 16اکتوبر(سیاست ڈاٹ کام) ‘صدائے احتجاج’ کے عنوان سے آج آل انڈیا مسلم مجلس مشاورت کے جلسہ عام میں، اسلام میں ایمان اور عقیدے کے بعد اتحاد کی اہمیت کو اجاگر کرکے مسلمانوں سے متحد ہونے کی پر اثر اپیل کی گئی۔ مشاورت کے صدر حامد نوید کی صدارت اور مولانا خالد اشرف کی سرپرستی میں ناگپاڑہ جنکشن پر ہوئے جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے ڈاکٹر بابا صاحب امبیڈکر کے پوتے پرکاش امبیڈکر نے کہا کہ اس ملک میں کئی لڑائیوں کی شروعات ہو چکی ہے ۔ اس میں ایک دستور کے بدلاؤ کی لڑائی ہے اس کا مقابلہ ہم سب کو ملکر کرنا ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ دلت ہمیشہ مسلمانوں کے ساتھ ہیں اور مسلمانوں کی لڑائی دلتوں کی لڑائی ہے ۔ جمعیت العلماء مہاراشٹر کے صدر مولانا مستقیم احسن اعظمی نے کہا کہ تمام مسلک کے لوگ ایک دوسرے کو برا کہنا چھوڑ دیں تو یہ اتحاد کی راہ میں پہلا قدم ہو گا۔اپنے صدارتی خطاب میں مشاورت کے صدر نوید حامد نے کہا کہ نء حکومت کے اقتدار میں آنے کے بعد سے ہی حالات خراب ہیں۔ جبکہ مودی جی نے اچھے دنوں کا وعدی کیا تھا۔ اچھے دن تو آئے نہیں بلکہ آج ملک خانہ جنگی جیسے حالات سے گزر رہا ہے ۔ اگر ایسے ہی حالات رہے تو حم 2019 کے الیکشن میں بی جے پی کو اسکی حیثیت بتا دینگے ۔
کشمیر کے مسئلہ پر بات کرتے ہوے انہوں نے کہا کہ کشمیر ہمارا ہے اور کشمیری بھی ہمارے ہیں۔ اگر کشمیری ہمارے نہیں تو کشمیر ہمارا کیسے ہو سکتا ہے ۔جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوے ممبئی پروگرام کمیٹی کے کنوینر عامر ادریسی نے کہا کہ ملت اسلامیہ ہند کو اتحاد کی جیسی ضرورت آج ہے شاید پہلے کبھی نہیں تھی۔ ایسے میں عروس البلاد ممبئی کے آل انڈیا مسلم مجلس کی قومی مجلس عاملہ کا اجلاس اور اس کے اندر ”صدائے اتحاد” کے عنوان کے تحت خطاب عام کا اہتمام ملت کے دل کی آواز ہے ۔ اتحاد امت کی ضرورت و اہمیت سے ہر کوئی واقف ہے ا ب وقت آگیا ہے کہ اس کی عملی تدابیر پر غور کیا جائے اور اس راہ کے روڑے ہٹائے جائیں تاکہ پائیدار اتحاد قائم ہوسکے ۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT