Wednesday , December 13 2017
Home / کھیل کی خبریں / ہندوستانی ویمنس ہاکی ٹیم 36سال بعد اولمپکس کیلئے کوالیفائی

ہندوستانی ویمنس ہاکی ٹیم 36سال بعد اولمپکس کیلئے کوالیفائی

یوروپین چمپئن شپس میں اسپین کے خلاف انگلینڈ کی کامیابی سے ہندوستانی ٹیم کی ریوگیمس 2016 میں رسائی

نئی دہلی۔29اگست ( سیاست ڈاٹ کام ) ہندوستانی ویمنس ہاکی ٹیم ‘ 36 سال کے طویل وقفہ کے بعد اولمپکس میں دوبارہ واپس آگئی جب وہ آئندہ سال ریوڈی جنیرو میں منعقد شدنی والمپکس کیلئے آج کوالیفائی ہوگئی ۔ ایک طرح سے انگلینڈ کی مرہون منت ہے کیونکہ وہ ( انگلینڈ) کلندن میں جاری یورو ہاکی چمپئن شپس کے فائنل میں رسائی حاصل کرلی ۔ لندن میں جاری ان مقابلوں کے ایک سیمی فائنل میں ہالینڈ نے جرمن پر اور دوسرے سیمی فائنل میں انگلینڈ نے اسپین پر فتح حاصل کرتے ہوئے یوروپی ہاکی چمپئن شپس کے فائنل میں رسائی حاصل کی ۔ فائنل میں رسائی حاصل کرنے والی یہ دونوں ٹیمیں پہلے ہی اولمپکس کوٹہ میں اپنا مقام بناچکی ہیں ۔ اس طرح ہندوستانی ویمنس ہاکی ٹیم کو گذشتہ ماہ بلجیم کے اینٹورپ میں منعقدہ ویمنس ورلڈ ہاکی لیگ سیمی فائنلس میں پانچواں مقام حاصل کرنے کی بنیاد پر اولمپک کوٹہ میں شامل کیا گیا ہے ۔ بین الاقوامی ہاکی فیڈریشن نے توثیق کی ہے کہ ہندوستانی ویمنس ٹیم ریوگیمس کیلئے کوالیفائی ہوچکی ہے ۔

فیڈریشن نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ ’’ لندن میں منعقدہ یونی بٹ یورو ہاکی چمپئن شپس کے سیمی فائنلس میں انگلینڈ کے ہاتھوں اسپین کی شکست کے بعد ہندوستانی ریوگیمس کیلئے کوالیفائی ہوچکے ہیں ‘‘ ۔ ریو گیمس 2016 کیلئے کوالیفائی دیگر 9ٹیموں کوریا ‘ ارجنٹائن ‘ انگلینڈ ‘ چین‘ جرمن ‘ ہالینڈ ‘ آسٹریلیا ‘ نیوزی لینڈ اور امریکہ کے ساتھ ہندوستانی ٹیم بھی شال ہوجائے گی ۔ ہندوستانی ویمنس ہاکی ٹیم نے آخری مرتبہ 1980ء کے دوران ماسکو اولمپک میں حصہ لیا تھا ‘ جہاں اس کو قابل احترام چوتھا مقام حاصل ہوا تھا ۔ ہاکی انڈیا نے اپنی ویمنس ہاکی ٹیم کی اس تاریخی کامیابی کی بھرپور ستائش کی ہے ۔ ہاکی ٹیم انڈیا کے صدر نریندر بترا نے اپنے ایک بیان میں کہا کہ ’’ ہاکی انڈیا اور سارے ملک کیلئے یہ قابل فخر لمحہ ہے جس کا ہم گذشتہ 36سال سے انتظار کررہے تھے ۔ حالیہ عرصہ کی اپنی کئی کامیابیوں میں یہ کارنامہ سب سے زیادہ اہم اور یادگار ہے ‘‘ ۔ بترا نے مزید کہا کہ ’’ میں ان تمام کھلاڑیوں اور کوچنگ اسٹاف کو مبارکباد پیش کرتا ہوں جنہوں نے اس خواب کو حقیقت میں تبدیل کیا

اور یہ کارنامہ ذمہ داریوں کے تئیں کھلاڑیوں کے عزم و جذبہ کو ظاہر کرتا ہے ۔ ہاکی انڈیا ان کھلاڑیوں ‘ ان کے کوچیس ‘ والدین ‘ سرپرستوں ‘ اسپانسرس اور شائقین ہاکی کا شکریہ ادا کرتے ہے جس کے تعاون کے بغیر ہماری یہ ہونہار لڑکیاں یہ کامیابی حاصل نہیں کرسکتی تھیں ۔ مجھے یقین ہے کہ یہ لڑکیاں ریو اولمپکس میں ( کامیابی کے ساتھ ) ہمیں فخر کا لمحہ فراہم کریں گی ‘‘ ۔ ہاکی انڈیا کے سکریٹری محمد مشتاق نے کہا کہ ’’ اولمپکس کیلئے کوالیفائی ہونا ہندوستانی ویمنس ہاکی ٹیم اور ہندستانی ہاکی برادری کیلے یقیناً ایک عظیم کارنامہ ہے ۔ کھلاڑیوں اورکوچنگ اسٹاف نے قابل ستائش کارکردگی کا مظاہرہ کیا ہے اور وہ ( کوچنگ اسٹاف) ہنوز ان کھلاڑیوں کو 2016 کے اولمپکس  گیمس کیلئے تربیت دے رہا ہے ۔ ہاکی انڈیا اپنی دمہ داری نبھا رہا ہے اور ٹیم کی ضروریات کی تکمیل کررہا ہے ۔ میں ساری ٹیم ‘کوچنگ اسٹاف اور تمام معاونین و شائقین کا شکریہ ادا کرتا ہوں ‘‘ ۔ ہندوستانی ویمنس ہاکی ٹیم مجوزہ ریو اولمپکس کیلئے 7ستمبر سے بیرونی ممالک میں کھیلوں کی مشق کا آغاز کرے گی ۔

TOPPOPULARRECENT