Saturday , October 20 2018
Home / کھیل کی خبریں / ہندوستانی ٹیموں کو آج تاریخ رقم کرنے کا موقع

ہندوستانی ٹیموں کو آج تاریخ رقم کرنے کا موقع

 

سینچورین ۔ 20 فبروری (سیاست ڈاٹ کام) ہندستانی مرد اور خواتین کرکٹ ٹیمیں سینچورین میں کل میزبان جنوبی افریقہ کے خلاف ہونے والے ٹوئنٹی20 میچوں میں ایک ساتھ سیریز جیت کر تاریخ رقم کرنے کی خواہاںہوں گی۔ہرمن پریت کور کی کپتانی میں ہندستانی خاتون ٹیم کے پاس جوہانسبرگ میں سیریز میں ناقابل تسخیر برتری بنانے کا موقع تھا لیکن جنوبی افریقہ نے وہ میچ پانچ وکٹ سے جیت کر پانچ میچوں کی سیریز کو 2۔1 کے اسکور کے ساتھ دلچسپ بنا دیا۔اگرچہ اسی دن بعد میں اسی میدان پر ویراٹ کوہلی کی کپتانی والی مرد ٹیم نے جنوبی افریقہ کو 28 رنز سے شکست دے کر تین میچوں کی سیریز میں 1۔0 کی برتری حاصل کرلی۔ویمنس ٹیم اب چوتھے میچ کو جیت کر جہاں سیریز میں 3۔1 کی ناقابل تسخیر برتری بنانا چاہے گی تو وہیں کوہلی کی زیر قیادت ٹیمکی نظریں دوسرے میچ کو جیت کر 2۔0 کی ناقابل تسخیر برتری بنانے پر ہوں گی۔اگر ہندستانی مرد اور خاتون ٹیمیں اپنے اپنے میچ جیت جاتی ہیں تو غیر ملکی زمین پر یہ پہلا موقع ہوگا جب دونوں ہندستانی ٹیموں نے ایک کے بعد ایک مسلسل دو سیریز جیتی ہوں گی ۔ہندستانی مرد ٹیم چھ میچوں کی ون ڈے سیریز 5۔1 سے اور خاتون ٹیم ون ڈے سیریز 2۔1 سے جیت چکی ہیں ۔ دونوں ٹیمیں اگر اس بے مثال موقع سے چوک جاتی ہیں تو پھر انہیں فیصلہ کن میچ کا انتظار کرنا پڑے گا۔ہندستانی خاتون ٹیم کو تیسرے میچ میں تجربہ کار میتھالی راج کا صفر پر آؤٹ ہونا بہت بھاری پڑا تھا۔گزشتہ دو میچوں میں مسلسل نصف سنچری بنا کر پلیئر آف دی میچ رہیں سابق کپتان راج پہلے اوور کی پانچویں گیند پر آؤٹ ہو گئیں جس کے بعد ہندستانی ٹیم 17.5 اوور میں 133 رن پر آؤٹ ہو گئی۔جنوبی افریقہ نے 19 اوور میں پانچ وکٹ پر 134 رن بنا کر میچ جیت لیا تھا۔میڈیم فاسٹ بولر شبنم اسماعیل نے 30 رن پر پانچ وکٹ لے کر ہندوستانی بیٹنگ کی کمر توڑ دی تھی۔سمرتی مدھانا نے 37 اور کپتان ہرمن پریت نے 48 رن بنائے لیکن 12 ویں اوور میں دو وکٹ پر 93 رن کی مضبوط موقف کے بعد ہندستان کی بیٹنگ کا زوال ہو گیا اور اس نے محض 40 رن جوڑ کر آخری آٹھ وکٹ گنوا دیئے ۔ہندستانی ویمنس ٹیم کو اس صورت حال سے بچنا ہو گا،خاص طور پر میتھالی کو وکٹ پر طویل عرصے تک ٹکا رہنا ہوگا۔
کوہلی کو براڈ مین کا ریکارڈ توڑنے کا موقع
ونڈے کرکٹ میں سابق ماسٹر بلاسٹر سچن تنڈولکر کے سب سے زیادہ سنچریوں کے عالمی ریکارڈ کو توڑنے کی طرف تیزی سے بڑھ رہے ہندوستانی کپتان کوہلی کے پاس جنوبی افریقہ کے دورے میں آخری دو ٹوئنٹی بہترمظاہرے کے سلسلہ کو جاری رکھتے ہوئے عظیم ڈان بریڈمین سے آگے نکلنے اور عظیم ویوین رچرڈز کے کلب میں پہنچنے کا سنہری موقع ہے ۔جنوبی افریقہ کے دورے میں زبردست فارم میں کھیل رہے کوہلی اس دورے میں اب تک 10 میچوں کی 13 اننگز میں 87.00 کی اوسط اور 82.38 کے اسٹرائک ریٹ کے ساتھ چار سنچریوں اور دو نصف سنچریوں سمیت 870 رنز بنا چکے ہیں۔وہ ایک دورے میں1000 رنز پورے کرنے سے محض130 رن دور ہیں۔کوہلی کو اس دورے میں اب دو ٹوئنٹی 20 میچ کھیلنے ہیں اگر وہ ان باقی دو میچوں 105 رنز بنالیتے ہیں تو وہ آسٹریلیا کے براڈمین کے انگلینڈ کے خلاف 1930 میں پانچ ٹسٹ میچوں میں 974 رن بنانے کے ریکارڈ سے آگے نکل جائیں گے ۔

TOPPOPULARRECENT