ہندوستان اور نیپال کے مابین تین معاہدات پردستخط

کٹھمنڈو 3 اگسٹ ( سیاست ڈاٹ کام ) وزیر اعظم نریندر مودی نے آج وزیر اعظم نیپال سشیل کوئرالا سے ملاقات کی اور اس موقع پر دونوں ملکوں نے تین معاہدات پر دستخط کئے جن میں ایک معاہدہ 5,600 میگاواٹ کے پنچیشور ملٹی پرپس پراجیکٹ پر بھی معاہدہ شامل ہے جس کے نتیجہ میں اس تعطل کا شکار پراجیکٹ پر کام شروع ہوجائیگا ۔ نریندر مودی آج صبح اپنے پہلے دورہ ن

کٹھمنڈو 3 اگسٹ ( سیاست ڈاٹ کام ) وزیر اعظم نریندر مودی نے آج وزیر اعظم نیپال سشیل کوئرالا سے ملاقات کی اور اس موقع پر دونوں ملکوں نے تین معاہدات پر دستخط کئے جن میں ایک معاہدہ 5,600 میگاواٹ کے پنچیشور ملٹی پرپس پراجیکٹ پر بھی معاہدہ شامل ہے جس کے نتیجہ میں اس تعطل کا شکار پراجیکٹ پر کام شروع ہوجائیگا ۔ نریندر مودی آج صبح اپنے پہلے دورہ نیپال پر یہاں پہونچے اور انہوں نے سنگھا دربار سیکریٹریٹ میں کوئرالا سے ملاقات کی ۔ دونوں قائدین نے مختلف مسائل بشمول نیپال میں قیام امن کی کوششوں اور دستور کی تیاری کے عمل پر بھی بات چیت کی ۔ اس کے علاوہ معاشی امور کے تعلق سے غور و خوض کیا گیا ۔ دونوں قائدین نے باہمی تعلقات کے مختلف امور پر غور کیا اور مشترکہ مفادات کے حامل امور کا جائزہ لیا ۔ نیپال اور ہندوستان نے تین علیحدہ یادداشت مفاہمت پر بھی باہمی بات چیت کے دران دستخط کئے ۔ یہ بات چیت مودی اور کوئرالا کی قیادت میں وفود کی سطح پر ہوئی ۔ پہلے معاہدہ کے تحت ہندوستان 65 ملین روپئے فراہم کریگا اور وہ آئیوڈائیز نمک حاصل کرکے نیپال کے دیہی علاقوں میں تقسیم کریگا ۔ یہ پروگرام نیپال میں ہندوستان کی مدد سے جاری ہے ۔ دونوں حکومتوں نے پنچیشور ملٹی پرپس پراجیکٹ کے بشمول دو یادداشت مفاہمت پر بھی دستخط کئے ۔ اس معاہدہ کے تحت دونوں ملکوں نے پنچیشور ڈیولپمنٹ اتھاریٹی سے متعلق کام کاج کو آگے بڑھانے سے اتفاق کیا ہے ۔

وزیر اعظم مودی نے کہا کہ پہلے ہی یہ فیصلہ ہوگیا تھا ۔ تین سالوں میں اس پراجیکٹ کے جملہ اخراجات بہت بڑھ گئے ہیں اور دونوں ملکوں نے اپنے اپنے طور پر کام کیا ہے ۔ انہوں نے اس امید کا اظہار کیا کہ اس پراجیکٹ پر ایک سال کے اندر اندر کام شروع ہوجائیگا ۔ انہوں نے کہا کہ پراجیکٹ اگر مکمل ہوجاتا ہے تو نیپال آج جتنی برقی تیار کرتا ہے اس سے پانچ گنا زیادہ برقی تیار کریگا ۔ یہ کوئی معمولی کامیابی نہیں ہے ۔ اس سے ترقی کی نئی بلندیوں کو طئے کرنے میں مدد ملیگی ۔ انہوں نے کہا کہ اس سلسلہ میں ہندوستان اپنا رول ادا کریگا ۔ دونوں ملکوں کے مابین طئے پائے تیسرے معاہدے میں دونوں ملکوں کے مابین ٹی وی چینلوں کی براڈ کاسٹنگ کو ممکن بنایا جاسکے گا ۔ یہ عماہدہ نیپال ٹیلی ویژن اور دوردرشن سے متعلق ہے ۔ باہمی بات چیت کی تکمیل پر دونوں وزرائے اعظز نے نیپال بیورو کی جانب سے شائع کئے جانے والے ایک یادگاری ٹکٹ پر دستخظ بھی کئے ۔ یہ یادگاری ٹکٹ وزیر اعظم نریندر مودی کے تاریخی دورہ ہند کے موقع پر نیپال بیورو کی جانب سے شائع کیا گیا ہے ۔

TOPPOPULARRECENT