Friday , November 24 2017
Home / Top Stories / ہندوستان اور چین کو ترقی کے یکساں مواقع

ہندوستان اور چین کو ترقی کے یکساں مواقع

باہمی تعاون مزید مستحکم بنانے سے اتفاق ، مودی ۔ لی کقیانگ ملاقات
کوالالمپور۔ 21 نومبر (سیاست ڈاٹ کام) وزیراعظم ہند نریندر مودی نے آج چین کے ہم منصب لی کقیانگ سے ملاقات کی اور کہا کہ دنیا کے تیزی سے ترقی پذیر دونوں ممالک کے اختلافات سے زیادہ باہمی مشترکہ مفادات ہیں۔ دونوں قائدین نے باہمی روابط کے علاوہ ایک دوسرے کی تشویش کے حامل عالمی مسائل پر بھی تبادلہ خیال کیا۔ وزارت اُمور خارجہ کے ترجمان وکاس سواروپ نے ٹوئٹ کیا کہ وزیراعظم نریندر مودی کی چین کے وزیراعظم لی کقیانگ سے ملاقات ہوئی اور باہمی مسائل کے علاوہ دیگر کئی اُمور پر بات چیت ہوئی۔ آسیان ۔ ہند چوٹی اجلاس کے موقع پر ہوئی اس ملاقات میں لی کقیانگ نے کہا کہ چین اور ہندوستان دنیا کی دو سب سے بڑی ترقی پذیر مملکتیں ہیں اور ان دونوں کے کئی مشترکہ مفادات ہیں ۔ چین اور ہندوستان باہمی اعتماد اور تعاون کو فروغ دے رہے ہیں جس سے ہر دو کیلئے کامیاب نتائج حاصل ہوں گے۔ اس کے ساتھ ساتھ دونوں ممالک ایشیا اور بحیثیت مجموعی ساری دنیا میں امن ، ترقی و خوشحالی کیلئے بھی ممکنہ رول ادا کررہے ہیں۔

لی کقیانگ نے ’’میڈ اِن چائنا2025ء ‘‘ اور ’’انٹرنیٹ پلس‘‘ مہم کا ذکر کرتے ہوئے ہندوستان کے ’’میک اِن انڈیا‘‘ اور ’’ڈیجیٹل انڈیا‘‘ پروگرام کا حوالہ دیا اور کہا کہ دونوں ممالک واضح ترقیاتی لائحہ عمل رکھتے ہیں اور باہمی تعاون کے ذریعہ دونوں اپنے مستقبل کو روشن بناسکتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ تجارت اور سرمایہ کاری، انفراسٹرکچر کی تعمیر اور مالی خدمات کے شعبہ میں چین اپنے پڑوسی ملک ہندوستان کے ساتھ ہاتھ ملانے کیلئے تیار ہے، اس کے علاوہ عوام کا عوام سے وسیع تر رابطہ بھی یقینی بنانے کیلئے تیار ہے تاکہ باہمی روابط کو خاطر خواہ عوامی تائید حاصل ہوسکے۔ چین کی سرکاری خبر رساں ایجنسی ژنہوا نے لی کقیانگ سے یہ بات بتائی۔ انہوں نے کہا کہ بنگلہ دیش ۔ چین ۔ ہندوستان ۔ میانمار معاشی راہداری کی تعمیر میں چین، ہندوستان کے ساتھ مل کر کام کرنے کیلئے تیار ہیں تاکہ جلد از جلد مثبت نتائج برآمد ہوسکیں۔ وزیراعظم نریندر مودی آسیان ۔ ہند اور ایسٹ ایشیا چوٹی اجلاس میں شرکت کیلئے ملائیشیا کے سہ روزہ دورہ پر آج صبح یہاں پہونچے۔ مودی نے آسیان بزنس اینڈ انویسٹمنٹ چوٹی اجلاس سے بھی خطاب کیا اور کہا کہ سست معیشت کو بہتر بنانے کیلئے مختلف اقدامات کئے جارہے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT