Thursday , November 23 2017
Home / Top Stories / ہندوستان ایک عظیم ملک : ٹرمپ

ہندوستان ایک عظیم ملک : ٹرمپ

ہندوستانی قائدین کے ساتھ کوئی ناراضگی نہیں ، ری پبلکن امیدوار
واشنگٹن ۔ 23 اپریل ۔(سیاست ڈاٹ کام) ری پبلکن پارٹی کے صدارتی امیدوار ڈونالڈ ٹرمپ نے ہندوستان میں چلائے جارہے کال سنٹرس کے نمائندوں پر تنقید کی اور اُن کے فرضی لہجہ کو نشانہ بنایا لیکن اس وقت انھوں نے ہندوستان کو ایک عظیم ملک قرار دیا اور کہا کہ وہ ہندوستانی قائدین سے ناراض نہیں ہیں۔ نیو یارک کے کھرب پتی نے کہاکہ انھو نے اپنی کریڈیٹ کارڈ کمپنی سے کہا کہ وہ اس بات کا پتہ چلائیں کہ آیا کسٹمرس کی حمایت امریکہ یا اوورسیز سے حاصل ہے یا نہیں اس پر آپ اندازہ کیجئے کہ کیا درست ہوسکتا ہے ۔آپ ہندوستان سے تعلق رکھنے والے ایک شخص سے بات کررہے ہوتے ہیں ۔ آخر یہ شخص کس طرح کام کرسکتا ہے لہذا میں نے یہ اندازہ کرنے کیلئے کال کیا اور اس سے سوال کیا کہ آپ کہاں سے بول رہے ہو؟ اور اس کے بعد اس نے فرضی ہندوستانی لہجہ میں کال سنٹر سے جواب دیا اور کہا کہ ہم ہندوستان سے بول رہے ہیں ۔ ٹرمپ کو اس جواب پر حیرانی ہوئی اور کہا کہ اُو گریٹ بہت خوب ، کہہ کر فون رکھ دیا ۔ انھوں نے کہاکہ ہندوستان ایک عظیم مقام ہے مجھے دیگر لیڈروں سے کوئی پریشانی نہیں ہے ، اول پریشانی ہمارے احمق قائدین سے ہے ۔ مجھے چین سے کوئی پریشانی نہیں ، جاپان پر غصہ نہیں آتا اور مجھے ویتنام سے بھی کوئی بعض نہیں ہے ۔ ہندوستان یا تمام ملکوں کے متعلق سے میں مطمئن ہوں ۔ انھوں نے کہاکہ میں نے ہندوستان کو فرضی کال کرکے معلوم کیا ، پتہ چلایا کہ بنکنگ نظام کس طرح پھیلایا گیا ہے ۔ امریکہ میں امریکنس بنکنگ اور کریڈیٹ کارڈ انڈسٹری کے ذریعہ وہ لوگ بیشمار دولت کمارہے ہیں ۔ لہذا ایسی پالیسیاں نہیں بنانی چائے جس سے چین ، جاپان ، میکسیکو ،ویتنام انڈیا کو ہمارے ذریعہ تجارت کرکے دولت کمانے کا موقع مل جائے ۔

TOPPOPULARRECENT