Thursday , August 16 2018
Home / کھیل کی خبریں / ہندوستان سٹے بازی کا گڑھ:محمد آصف

ہندوستان سٹے بازی کا گڑھ:محمد آصف

کراچی ۔9 ڈسمبر(سیاست ڈاٹ کام) اسپاٹ فکسنگ اسکینڈل میں سزا یافتہ ٹسٹ فاسٹ بولر محمد آصف نے کہا ہے کہ ہندوستان سٹے بازی کا گڑھ ہے اور وہیں سے کھلاڑیوں کو میچ فکسنگ اور اسپاٹ فکسنگ میں پھنسانے کی سازش تیار کی جاتی ہے۔ اس میں کوئی شبہ نہیں جو پاکستانی کرکٹرز بین الاقوامی سطح پر بہتر مظاہرہ کررہا ہوتا ہے اسی کا نام اسپاٹ فکسنگ یا میچ فکسنگ اسکینڈل میں شامل ہوجاتا ہے۔ محمد آصف نے مزیدکہا کہ شعیب اختر سے سچن تنڈولکر ڈرتے تھے۔ کراچی ٹسٹ کے دوران راولپنڈی ایکسپریس شعیب اختر بہت تیز بولنگ کررہے تھے میں قریب کھڑا فیلڈنگ کر رہاتھا جہاں میں نے واضع طورپر دیکھا کہ ہندوستانی ماسٹر بیٹسمین سچن کے پیر کانپ رہے تھے اور جس وقت وہ بولنگ کرتے تھے سچن کی آنکھیں بند ہوجاتی تھیں اسی وجہ سے ایک گیند ان کے ہیلمٹ پر بھی لگی تھی۔ ان کے علاوہ سوروگنگولی بھی شعیب اختر کی بولنگ سے بہت ڈرتے تھے۔ محمد آصف نے کہا کہ کرپشن کا اصل گڑھ ہندوستان ہے جہاں سے مافیا ساری دنیا میں سرگرم ہوتاہے۔ مجھے ایسا ضرور لگا کہ جو پاکستانی کھلاڑی انٹرنیشنل سطح پر خطرہ بن رہے ہوتے ہیں انہیں کسی نہ کسی طرح کرپشن کی نذر کردیا جاتا ہے۔ اس وقت میں اور عامر اچھی فارم میں تھے اور اب اْنہیں شرجیل خان بہترین بیٹسمین کے روپ میں دکھائی دے رہے تھے۔ محمد آصف نے مزید کہا کہ ہندوستان اور پاکستان کے درمیان مقابلے انتہائی اہم ہیں وہ کرکٹ کیلئے ضروری ہیں۔ انہوں نے کہا کہ وہ ڈومیسٹک کرکٹ میں بہتر مظاہرے کررہے ہیں۔ کوشش کررہے ہیں کہ پاکستان ٹیم میں واپسی کرسکیں۔ محمد آصف نے شکوہ کیاکہ پاکستان کرکٹ بورڈ کا رویہ محمد عامر کے ساتھ مختلف رہا جبکہ میرے اور سلمان بٹ کے ساتھ مختلف ہے جس کا دکھ ہوتا ہے۔

TOPPOPULARRECENT