Saturday , December 16 2017
Home / دنیا / ہندوستان نے “H-1B” ویزا مسئلہ کو امریکہ کے سامنے شدت سے اُٹھایا

ہندوستان نے “H-1B” ویزا مسئلہ کو امریکہ کے سامنے شدت سے اُٹھایا

آئی ٹی پروفیشنلس کی جانب سے امریکہ کو ہی فائدہ ۔ مرکزی وزیر سریش پربھو کابیان
واشنگٹن ۔ 28اکتوبر ۔(سیاست ڈاٹ کام) مرکزی وزیر سریش پربھو نے آج کہاکہ ہندوستان نے امریکہ کے سامنے H-1B ویزا اور L1 ویزا کے مسئلہ کو پوری شدت سے پیش کیا ہے۔ انھوں نے زور دے کر کہا کہ امریکی معیشت میں ہندوستانی آئی ٹی پروفیشنلس کا اہم رول رہا ہے ۔ اگر امریکہ نے ہندوستانی آئی ٹی شعبہ کو نظرانداز کردیا تو خود اس کے لئے مشکلات پیدا ہوں گی ۔ حقیقت تو یہ ہے کہ ہندوستانی آئی ٹی ملازمین کی جانب سے ہی امریکہ میں آئی ٹی شعبہ کوترقی حاصل ہوئی ہے ۔ امریکہ نے حال ہی میں H-1B اور L1 ویزا کے قواعد میں سختی برتی ہے ۔ ٹرمپ نظم و نسق نے امریکی ورکرس کے تحفظ کیلئے بعض سخت فیصلے کئے ہیں ۔ ٹرمپ کے خیال میں بیرونی ورکرس کی وجہ سے امریکہ میں امریکیوں کے ساتھ امتیاز برتا جارہاہے اور ان کی جگہ بیرونی ملازمین کو ترجیح دی جارہی ہے ۔ اب ایک نئے احکام میں ٹرمپ نظم و نسق نے اس ہفتہ H-1Bاور L1ویزا کی تجدید کے لئے مزید مشکلات پیدا کررہی ہیں۔ سریش پربھو نے کہا کہ ہم نے ہندوستانی پروفیشنلس کے مسئلہ کو امریکہ کے سامنے پوری شدت سے اُٹھایا ہے اور کہا ہے کہ ہند۔ امریکہ باہمی تجارتی پالیسی فورم میں بھی ہم نے اس مسئلہ کو اُٹھایا ہے جس میں امریکی تجارت کے نمائندے رابرٹ لاٹیزر نے بھی شرکت کی تھی ۔ ہم نے اس فورم کے سامنے وضاحت کی ہے کہ ہم یہ مسئلہ اس لئے نہیں اُٹھارہے ہیں کہ اس سے ہندوستانیوں کو مشکلات درپیش ہوں گی بلکہ ہم یہ مسئلہ امریکی معیشت کے لئے پیش کررہے ہیں کیوں کہ آئی ٹی پروفیشنلس ہی امریکہ کی معیشت کو استحکام دینے میں اہم کردار ادا کررہے ہیں ۔

TOPPOPULARRECENT