Tuesday , November 21 2017
Home / پاکستان / ہندوستان پر جنگ بندی کی خلاف ورزی کا الزام

ہندوستان پر جنگ بندی کی خلاف ورزی کا الزام

سلامتی کونسل کو پاکستان کا مکتوب ، 20 شہریوں کی ہلاکت کا دعویٰ
اسلام آباد۔ 5 سپٹمبر۔(سیاست ڈاٹ کام) اقوام متحدہ میں پاکستان کی سفیر ملیحہ لودھی نے سلامتی کونسل کے صدر روس کے سفیر ویٹالی چرکین کو خط لکھ کر ہندوستانی اشتعال انگیزیوں کے بارے میں بتاتے ہوئے ہندوستان کے ساتھ 2003 کے سیز فائر کے معاہدے پر عملدر آمد پر زور دیا ہے۔پاکستانی سفیر کا کہنا ہے کہ عالمی ادارے کو جنگ بندی معاہدے کی خلاف ورزیوں خاص طور پر ان کارروائیوں کا نوٹس لینا چاہیے جن میں عام شہری ہلاک ہوئے۔پاکستان کا کہنا ہے کہ اگست کے دوران ہندوستان کی جانب سے سیزفائر معاہدے کی خلاف ورزیوں میں اضافہ ہوگیا، ایک ماہ کے دوران 20 شہری ہلاک اور 100 زخمی ہوئے۔انہوں نے سلامتی کونسل پر زور دیا کہ ہندوستان کی اشتعال انگیزی ختم کرنے میں اپنا کردار ادا کرے ۔ لودھی نے اس خط کو ایک سکیورٹی کونسل کی سرکاری دستاویز کے طور پر دیگر ارکان کو ارسال کرنے کی بھی درخواست کی۔پاکستان کی جانب سے ہندوستان کو آگاہ کیا جا چکا ہے کہ ان کی فورسز نے 2 ماہ میں 70 بار سیز فائر کی خلاف ورزی کی ہے۔ دوسری جانب’ دی ہندو ‘کی ایک رپورٹ کے مطابق ہندوستان کی بارڈر سکیورٹی فورس کے حکام کا دعویٰ ہے کہ مئی 2014 سے مئی 2015 کے دوران پاکستان کی جانب سے 46 بار سیز فائر کی خلاف ورزی کی گئی ۔ یاد رہے کہ ملیحہ لودھی نے دو ماہ قبل سیکیورٹی کونسل کے اجلاس سے خطاب میں بھی کہا تھا کہ ملک کے بعض حصوں کو غیرمستحکم کرنے کی کوئی بھی کوشش یا اس کی علاقائی سالمیت پر حملے کا بھرپور قوت کے ساتھ جواب دیا جائے گا۔

TOPPOPULARRECENT