Monday , September 24 2018
Home / کھیل کی خبریں / ہندوستان کو آج بنگلہ دیش کاچیلنج

ہندوستان کو آج بنگلہ دیش کاچیلنج

کولمبو۔7 مارچ (سیاست ڈاٹ کام ) ہندوستانی ٹیم سری لنکا کے خلاف پہلے میچ میں پانچ وکٹ کی زبردست شکست کے بعد جب کل دوسرے میچ میں بنگلہ دیش کے خلاف کھیلنے اترے گی تو اس کا واحد مقصد ٹوئنٹی20 سہ رخی سیریز میں واپسی کرناہوگا۔ سہ رخی سیریز میں ہر ٹیم کو دو دو میچ کھیلنے ہیں اور سرفہرست دو ٹیموں کے مابین18 مارچ کو فائنل کھیلا جائے گا۔ اپنے کئی سینئر کھلاڑیوں کوآرام دیکر نوجوان کھلاڑیوں کے بھروسے اتری ہندوستانی ٹیم پہلے مقابلے میں174 رنز کا چیلنجنگ اسکور بنانے کے باوجود اس کا دفاع نہیں کر سکی۔شکھر دھون نے 49 گیندوں پر چھ چھکوں اور چھ چوکوں کی مدد سے 90 رنز کی بہترین اننگز کھیلی لیکن کپتان روہت شرما صفر اور سریش رائنا کے ایک رن پر آؤٹ ہونے کا ٹیم کی اسکورننگ پر اثر پڑا۔ منیش پانڈے نے37، رشبھ پنت نے23 اور وکٹ کیپر دنیش کارتک نے ناٹ آؤٹ13 رنز بنائے لیکن ٹیم200 کے ہندسے سے کافی پیچھے رہ گئی۔سری لنکا نے ہدف کا بہترین طریقے سے تعاقب کیا اور اپنا پانچواں وکٹ 136 رن پر گنوانے کے باوجود18.3 اوور میں جیت حاصل کر لی۔ میچ میں جے دیو انادکٹ کی اننگز کا18 واں اوور فیصلہ کن ثابت ہوا جس میں دو چوکوں اورایک چھکے سمیت کل16 رنز گئے ۔آئی پی ایل میں موٹی قیمت حاصل کرنے والے بائیں ہاتھ کے بولر جے دیو انادکٹ کویہ سیکھنا ہوگا کہ بین الاقوامی کرکٹ آئی پی ایل کے مقابلے سے بالکل مختلف ہے ۔اس سیریز میں ہندوستان کی کپتانی سنبھال رہے روہت شرما نے بھی میچ کے بعد کہا کہ 174 رنز چیلنجنگ اسکور تھا اور اس بہتر وکٹ پر آخری اووروں میں اور تیزی لائی جا سکتی تھی۔ اپنی بولرس کا دفاع کرتے ہوئے روہت نے کہا ہمارے بولروں نے سب کچھ کیا لیکن کئی مرتبہآپ جو چاہتے ہیں وہ نہیں ہو پاتا ہے ۔ ہمارے پاس نئے بولر ہیں لیکن کافی تجربہ ہے ۔ روہت نے اعتماد ظاہر کیا کہ ٹیم پہلے میچ کی غلطیوں سے سبق لیتے ہوئے بنگلہ دیش کے خلاف دوسرے میچ میں بہتر کارکردگی پیش کرے گی۔

ونڈے میں تین ڈبلز سنچری بنانے کا ریکارڈ اپنے نام رکھنے والے ہٹمین کے نام سے مشہور روہت نے جنوبی افریقہ کے دورے میں دو ٹسٹ، چھ ونڈے اور تین ٹوئنٹی20 میچوں میں صرف ایک سنچری اننگز کھیلی تھی اور ان کے نام کوئی نصف سنچری نہیں تھی۔ اس میچ میں بھی وہ صفر پر آؤٹ ہو گئے تھے ۔ہندوستانی اننگز میں90 رنز بنانے والے شکھر دھون نے بھی میچ میں سب سے بڑا فرق پاور پلے کو بتایا۔ہندوستان نے جہاں پاور پلے میں دو وکٹ کے نقصان پر40 رنز بنائے تھے وہیں سری لنکا نے دو وکٹوں کے نقصان پر75 رنز بنائے تھے۔شکھرکا خیال ہے کہ ہندوستان کو پاور پلے کے کھیل میں اصلاح کرنا ہوگا۔ ہندوستان کو بولنگ میں جسپریت بمراہ اور بھونیشور کمارکمی محسوس ہوئی جنہیں اس سیریز کے لیے آرام دیا گیا ہے ۔ہندوستان جب دوسرے میچ میں اتریگا تو اس کے بولروں کو بہترین کارکردگی دکھانا ہوگا۔ممکن ہے دوسرے میچ میں اسپنر اکشر پٹیل کو موقع مل سکتا ہے کیونکہ اس مقابلے میں ہندوستان کاا سپن شعبہ کمزورثابت ہوا۔یہ دیکھنا دلچسپ ہوگا کہ روہت دوسرے میچ میں اسی الیون کے ساتھ اترتے ہیں یا اس میں کچھ تبدیلیاں کرتے ہیں۔بنگلہ دیش کی کمان محموداللہ کے ہاتھوں میں ہے جنہیں آل راؤنڈر شکیب الحسن کے ہٹنے کے بعد کپتانی پر برقرار رکھا گیا ہے ۔ بنگلہ دیشی ٹیم کے پاس امرائالقیس ، محموداللہ، مہدی حسن، مشفق الرحیم، مستفیض الرحمن، سومیا سرکار اور تمیم اقبال جیسے بہترین کھلاڑی ہیں جو دوسری ٹیم کا کام خراب کر سکتے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT