Tuesday , January 23 2018
Home / ہندوستان / ہندوستان کو فروغ کا تاریخی موقع حاصل

ہندوستان کو فروغ کا تاریخی موقع حاصل

نئی دہلی۔ 17 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) کئی کلیدی اصلاحات کے مسودات قانون کی منظوری میں رکاوٹ پیدا ہونے پر حکومت نے آج اپوزیشن سے اپیل کی کہ وہ ’’رکاوٹیں پیدا کرنے والوں‘‘ کا کام انجام نہ دیں، کیونکہ ملک کو ’’ترقی کرنے کا تاریخی موقع‘‘ حاصل ہوا ہے۔ انہوں نے کہا کہ جی ڈی پی توقع ہے کہ آئندہ سال 8 فیصد سے زیادہ ہوجائے گی۔ ہندوستان، چین کو

نئی دہلی۔ 17 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) کئی کلیدی اصلاحات کے مسودات قانون کی منظوری میں رکاوٹ پیدا ہونے پر حکومت نے آج اپوزیشن سے اپیل کی کہ وہ ’’رکاوٹیں پیدا کرنے والوں‘‘ کا کام انجام نہ دیں، کیونکہ ملک کو ’’ترقی کرنے کا تاریخی موقع‘‘ حاصل ہوا ہے۔ انہوں نے کہا کہ جی ڈی پی توقع ہے کہ آئندہ سال 8 فیصد سے زیادہ ہوجائے گی۔ ہندوستان، چین کو پیچھے چھوڑ دے گا۔ مرکزی وزیر فینانس ارون جیٹلی کو اس الزام کو مسترد کردیا کہ حکومت مالدار افراد کی حامی ہے کیونکہ اس میں کارپوریٹ ٹیکس میں 10 فیصد سے کمی کرکے اسے 7.50 فیصد کردیا ہے۔ مرکزی وزیر فینانس نے اس جنگ کو کانگریس کے سر پر مسلط کرنے کی کوشش کرتے ہوئے کہا کہ انہیں یہ نظریہ راست محاصل قانون سے حاصل ہوا ہے جو یو پی اے حکومت کے مرکزی وزیر فینانس پی چدمبرم نے تیار کیا تھا۔ انہوں نے زیادہ شعبوں میں غیرملکی سرمایہ کاری کی حکومت کی جستجو کو جائز قرار دیتے ہوئے اس کا بھرپور دفاع کیا اور کہا کہ زیادہ سے زیادہ مالیہ ملازمتوں کے مواقعے فراہم کرنے، انفراسٹرکچر تیار کرنے اور سماجی بہبود کے پروگرامس شروع کرنے کے لئے ضروری ہے۔

آر بی آئی کو درپردہ پیغام دیتے ہوئے جیٹلی نے کہا کہ سود کی شرحوں میں کمی کی جائے اور انتباہ دیا کہ بصورتِ دیگر ترقی متاثر ہوگی۔ وہ لوک سبھا میں مطالباتِ زر پر مباحث کا جواب دے رہے تھے۔ بعدازاں مطالباتِ زر کو ندائی ووٹ کے ذریعہ منظور کردیا گیا۔ اس طرح بجٹ کی مشق کا پہلا حصہ ایوان زیریں میں مکمل ہوگیا۔ انہوں نے کہا کہ یہ تاریخی موقع ہے جہاں ہندوستان کے ترقی کرنے کا حقیقی امکان موجود ہے۔ دنیا بھر کی نظریں ہندوستان پر ٹکی ہوئی ہیں۔ وہ اسے ایک درخشاں ملک سمجھتے ہیں، ہمیں اس موقع سے استفادہ کرنا چاہئے۔ ارون جیٹلی نے کہا کہ وہ ہاتھ جوڑ کر اپیل کرتے ہیں کہ پالیسیوں میں رکاوٹیں پیدا نہ کریں، جن کی وجہ سے ملک اگلے مرحلے تک پہنچ نہ سکے۔ تاریخی موقع کا تذکرہ کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ کیا ہمیں تیقن دینا پڑے گا کہ ترقی کی راہ میں رکاوٹ پیدا نہ ہونے دیں گے۔ انہوں نے کہا کہ عالمی معیشت کی صورتحال ہندوستان کے لئے موزوں ہیں، کیونکہ برازیل کو چیلنج کا سامنا ہے، یوروپ کی معاشی ترقی میں انحطاط پیدا ہوگیا ہے۔ چین کا 7 فیصد جی ڈی پی اب معمول پر آگیا ہے۔ بین الاقوامی مالیاتی فنڈ کا کہنا ہے کہ ہندوستان، چین سے بھی آگے بڑھ جائے گا۔ مرکزی وزیر داخلہ کے تبصرے نمایاں اہمیت رکھتے ہیں، کیونکہ بعض کلیدی معاشی اصلاحات کی قانون سازیاں جیسے حصول اراضی قانون، کوئلہ قانون، کانکنی اور معدنیات قوانین راجیہ سبھا میں منظور نہیں ہوسکے اور اب بھی تعطل کا شکار ہیں۔

TOPPOPULARRECENT