Tuesday , December 11 2018

ہندوستان کیلئے سیکولر ازم کے اچھے نتائج کا ادعا

عالمی کانفرنس برائے استحکام جمہوریت سے مذہبی رہنما دلائی لاما کا خطاب

عالمی کانفرنس برائے استحکام جمہوریت سے مذہبی رہنما دلائی لاما کا خطاب
نئی دہلی 23 مارچ (سیاست ڈاٹ کام )دلائی لاما نے آج سیکولررزم کی تائید کرتے ہوئے کہا کہ اس نے ہندوستان کیلئے ’’اچھے نتائج ‘‘ برآمد کئے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ چند استثنائی واقعات کے سوائے ہندوستان ایک مستحکم جمہوریت ہے ۔ طبت کے مذہبی رہنما کے یہ تبصرے اہمیت رکھتے ہیں کیونکہ ملک میں اقلیتوں پر اور ان کے مذہبی مقامات پر حملوں کا سلسلہ جاری ہے ۔ دلائی لاما نے عالمی کانفرنس برائے استحکام جمہوریت برائے ایشیاء ‘شراکت داری ‘سب کا ساتھ اور حقوق ‘‘سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ مذہب پر تنازعات بعض اوقات پیش آتے ہیں یہ اچھی بات نہیں ہے ہمیں ہر شخص کو ایک دوسرے کے قریب لانا چاہئے ۔ باہمی اعتماد بحال کرنا چاہئے کیونکہ سنگین تنازعات کی یکسوئی بے اعتمادی کے ساتھ نہیں ہوسکتی ۔ انہوں نے کہا کہ ہندوستان میں قانون کی حکمرانی اور جمہوریت کی جڑیں بہت گہرائی تک پہنچ چکی ہیں ۔ چند استثنائی واقعات کے سوائے یہ ملک دیگر ممالک کی بہ نسبت زیادہ مستحکم جمہوریت ہے ۔ دستور ہند کی بنیاد سیکولرزم ہے اور اس کے اچھے نتائج برآمد ہوئے ہیں۔ انہوں نے آزادی کی اہمیت پر زور دیتے ہوئے اسے انسانوں کی تخلیقی صلاحیت کیلئے ضروری قرار دیا ۔

TOPPOPULARRECENT