Saturday , January 19 2019

ہندوستان کی سلامتی کونسل کی مستقل رکنیت کو برطانیہ اور فرانس کی تائید

اقوام متحدہ 13 نومبر (سیاست ڈاٹ کام) برطانیہ، فرانس اور نیپال نے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل میں اصلاحات کے ذریعہ ہندوستان کی مستقل نشست کیلئے امیدواری کی تائید کی ہے کیوں کہ رکن ممالک نے پیشرفت کے فقدان پر اور دیرینہ زیرالتواء اصلاحات پر شدید مایوسی ظاہر کی ہے۔ جنرل اسمبلی کے اجلاس میں کل 50 ممالک نے شرکت کی۔ اُنھوں نے کہاکہ صیانتی کونسل کے اصلاحات میں پہلے ہی کافی تاخیر ہوچکی ہے۔ ضروری ہے کہ یہ اصلاحات موجودہ سیاسی حقائق کی عکاسی کریں۔ مساویانہ نمائندگی اور صیانتی کونسل کی رکنیت پر اضافہ کے موضوع پر مباحث کا آغاز کرتے ہوئے جنرل اسمبلی کے صدر سام پوٹیسا نے ایک بار پھر توثیق کی کہ اقوام متحدہ میں اصلاحات اُس کی اوّلین ترجیحات میں سے ایک ہیں۔ ہندوستان نے ادعا کیاکہ اقوام متحدہ کے طاقتور ادارہ میں 2015 ء تک اصلاحات ہوجانے چاہئیں اور رکن ممالک نے اِس بارے میں حقیقی مذاکرات کا آغاز ہونا چاہئے تاکہ اصلاحات اور توسیع کو بغیر اصلاح کے صیانتی کونسل کا ایک شدید بے عمل شعبہ نہ سمجھا جانے لگے۔

TOPPOPULARRECENT