Sunday , June 24 2018
Home / کھیل کی خبریں / ہندوستان کے خلاف پہلی کامیابی پر پاکستانی کھلاڑیوں کی توجہ

ہندوستان کے خلاف پہلی کامیابی پر پاکستانی کھلاڑیوں کی توجہ

سڈنی۔12فبروری( سیاست ڈاٹ کام)اتوارکو ہندوستان کے خلاف کھیلے جانے والے افتتاحی مقابلہ کے متعلق پاکستان کے کسی بھی کھلاڑی سے سوال کیا جارہا ہے تو سبھی کھلاڑیوں کی توجہ اسی بات پر مرکوز ہے کہ وہ ورلڈ کپ ٹورنمنٹ میں حریف ٹیم کے خلاف پہلی کامیابی حاصل کرنے کیلئے کوشاں ہے ۔ 1992ء میں جب آسٹریلیا اور نیوزی لینڈ نے پہلی مرتبہ ورلڈ کپ کی میزبا

سڈنی۔12فبروری( سیاست ڈاٹ کام)اتوارکو ہندوستان کے خلاف کھیلے جانے والے افتتاحی مقابلہ کے متعلق پاکستان کے کسی بھی کھلاڑی سے سوال کیا جارہا ہے تو سبھی کھلاڑیوں کی توجہ اسی بات پر مرکوز ہے کہ وہ ورلڈ کپ ٹورنمنٹ میں حریف ٹیم کے خلاف پہلی کامیابی حاصل کرنے کیلئے کوشاں ہے ۔ 1992ء میں جب آسٹریلیا اور نیوزی لینڈ نے پہلی مرتبہ ورلڈ کپ کی میزبانی کی تھی تب سے ہندوستان اور پاکستان کے درمیان تاحال ورلڈ کپ کے پانچ مقابلے ہوچکے ہیں لیکن پاکستانی ٹیم ہنوز پہلی کامیابی کے تعاقب میں ہے ۔ پاکستانی کرکٹ ٹیم کے کپتان مصباح الحق نے کہا ہے کہ ناکامی کا سلسلہ اس مرتبہ ٹوٹے گا اور ہماری کوشش ہے کہ تاریخ کو تبدیل کردے ۔ پاکستانی ٹیم 1992ء ‘ 1996ء ‘1999ء اور 2011ء میں نشانہ کے تعاقب میں ناکام رہی جب کہ 2003ء کے ایونٹ میں ہندوستانی ٹیم نے نشانہ کا کامیاب تعاقب کرلیا تھا ۔

پاکستان کے عالمی شہرت یافتہ آل راؤنڈر شاہد آفریدی نے ان عزائم کا اظہار کیا ہے کہ اس مرتبہ تاریخ بدلے گی اور ہندوستان کے خلاف ان کی ٹیم پہلی کامیابی حاصل کریگی ۔ آفریدی جو کہ 2011ء ورلڈ کپ میں پاکستانی ٹیم کی قیادت کررہے تھے تاہم ان کی قیادت میں موہالی میں کھیلے گئے سیمی فائنل میں پاکستانی ٹیم کو مہیندر سنگھ کی زیر قیادت ہندوستانی ٹیم کے خلاف شکست ہوئی تھی ۔ سینئر بیٹسمین یونس خان نے کہا ہے کہ ہندوستان کو شکست دینے کا یہ صحیح وقت ہے جب کہ دراز قد فاسٹ بولر محمد عرفان کو امید ہے کہ وہ ہندوستانی ٹیم کی کلیدی وکٹیں حاصل کرتے ہوئے ٹیم کو کامیابی کی بنیاد فراہم کریں گے ۔ عرفان کے بموجب وہ جانتے ہیں کہ ٹیم کو ان سے بہتر مظاہرہ کی امید ہے ۔ صہیب مقصود بھی کامیابی میں اہم رول ادا کرناچاہتے ہیں ۔

TOPPOPULARRECENT