Monday , December 18 2017
Home / Top Stories / ہند۔بنگلہ سرحد پر گائے کی اسمگلنگ روکنے چوکسی کی ضرورت

ہند۔بنگلہ سرحد پر گائے کی اسمگلنگ روکنے چوکسی کی ضرورت

ملک کی ترقی و خوشحالی پر بعض عناصر کی بری نظر، ناپاک سرگرمیوں کیخلاف انتباہ: راجناتھ
نئی دہلی۔20 مئی (سیاست ڈاٹ کام) مرکزی وزیر داخلہ راج ناتھ سنگھ نے ہند۔بنگلہ سرحد پر گائے کی اسمگلنگ کو روکنے کے لئے بی ایس ایف کو مزید چوکسی اختیار کرنے پر زور دیا ہے اور اس عہد کا اظہار کیا کہ سرحد پر مجرمانہ سرگرمیوں کو روکا جائے گا۔ انہوں نے مزید کہا کہ تمام شعبوں میں ہندوستان کی سکیوریٹی کو یقینی بنانے کے لئے ایک قومی تھنک ٹینک (مفکر ادارہ) کے قیام کے لئے انہوں نے مرکزی معتمد داخلہ کو ہدایت کی ہے۔ راج ناتھ سنگھ نے کہا کہ ملک کی زمینی سرحدوں کو ’قطعی طور پر محفوظ بنانے ‘ کے لئے ایک منصوبہ تیار کیا جارہا ہے۔ تمام سرحدوں پر سکیوریٹی کو چوکس و مستعد بنانے کے لئے عصری ٹیکنالوجی پر مبنی لیزر والس اور نگراں آلات استعمال کئے جارہے ہیں۔ بی ایس ایف کے زیر اہتمام راج ناتھ سنگھ نے آج یہاں ’’بدلتے تناظر میں سرحد انتظامات‘‘ کے زیر عنوان اپنے کلیدی خطبہ میں کہا کہ ہندوستان کی ترقی و خوشحالی اور معاشی تحفظ کو یقینی بنانے کے لئے سکیوریٹی کے بدلتے تقاضوں سے ہم آہنگ رہنے کے لئے ہمارے فورسیس کو ہمہ وقت خبردار اور چوکس رہنے کی ضرورت ہے کیوں کہ بعض عناصر جن میں چند پڑوسی بھی شامل ہیں ہمارے ملک کے خلاف ناپاک سرگرمیوں کے ذریعہ بری نظر ڈال رہے ہیں۔ راج ناگھ سنگھ نے کہا کہ ’’گائیوں کی اسمگلنگ گزشتہ کئی سال سے جاری ہے۔ میں بی ایس ایف جوانوں کو اس بات پر مبارکباد دیتا ہوں کہ گائیوں کی اسمگلنگ 23 لاکھ سے گھٹ کر اب صرف 3 لاکھ تا 3.5 لاکھ رہ گئی ہے۔ بی ایس ایف کے افسران اور جوانوں پر میں زور دینا چاہتا ہوں کہ گائیوں کی اسمگلنگ روکنے کیلئے مزید چوکسی اختیار کی جائے۔ انہوں نے کہا کہ دراندازی کے واقعات میں 50 فیصد کمی ہوئی ہے اور دہشت گردوں کو بڑی تعداد میں ہلاک کیا گیا ہے جس کا کریڈٹ میں اپنے بہادر سکیوریٹی فورسس کو دیتا ہوں۔‘‘

TOPPOPULARRECENT