Monday , November 20 2017
Home / Top Stories / ہند۔ فرانس نے مابین 14 معاہدات پر دستخط ‘ دہشت گردی کی مذمت

ہند۔ فرانس نے مابین 14 معاہدات پر دستخط ‘ دہشت گردی کی مذمت

رافالے لڑاکا طیاروں کی خریدی پر بھی یادداشت مفاہمت ۔ پاکستان پر دہشت گردوں کے خلاف کارروائی پر زور

نئی دہلی 25 جنوری ( سیاست ڈاٹ کام ) ہندوستان اور فرانس نے 36 فرانسیسی رافالے طیاروں کی خریدی کیلئے آج ایک یادداشت مفاہمت پر دستخط کئے تاہم اس لڑآکا جیٹ کی قیمت کے مسئلہ پر اختلافات کے نتیجہ میں کئی بلین ڈالرس مالیتی اس معاملت کو قطعیت نہیں دی جاسکی ہے ۔ فرانس کے دورہ کنندہ صدر فرینکوئیس اولاند اور وزیر اعظم نریندر مودی کے مابین آج طئے پائے 14 معاہدات میںیہ یادداشت مفاہمت بی شامل ہے جن میں دہشت گردی کے انسداد پر تعاون میں اضافہ ‘ سکیوریٹی اور سیول نیوکلئیر توانائی کے شعبہ میں تعاون بھی شامل ہے ۔ نریندر مودی نے اولاند کے ساتھ ایک مشترکہ پریس کانفرنس میں کہا کہ معاشی پہلو کو چھوڑ کر ہندوستان اور پاکستان نے بین حکومتی معاہدہ پر دستخط کرلئے ہیں تاکہ 36 رافالے طیاروں کی خریداری کو یقینی بنایا جاسکے ۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں امید ہے کہ ان طیاروں کی خریدی کے معاشی پہلو کو بھی بہت جلد حل کرلیا جائیگا ۔ آئی جی اے پر دستط کو ایک فیصلہ کن اقدام قرار دیتے ہوئے فرانسیسی صدر نے کہا کہ کچھ معاشی پہلو ہیں جنہیں آئندہ دو دن میں حل کرلیا جائیگا انہوں نے یہ بھی واضح کیا کہ ان طیاروں کو آئی ایس آئی ایس کیلئے بھی استعمال کیا گیا ہے ۔ اس طرح انہوں نے ان طیاروں کی افادیت اور اہمیت کو اجاگر کرنے کی کوشش کی ہے ۔ ہندوستان اور فرانس کے مابین 36 رافالے طیاروں کی خریداری پر گذشتہ سال مارچ سے بات چیت چل رہی تھی جب نریندر مودی نے فرانس کا دورہ کیا تھا ۔ تاہم ابھی بھی قطعی معاملت نہیں ہوسکی ہے کیونکہ ابھی بھی دونوں ممالک اس کی قیمت پر تبادلہ خیال کر رہے ہیں۔ علاوا زیں ہندوستان اور فرانس نے آج فیصلہ کیا کہ وہ انسداد دہشت گردی تعاون میں اضآفہ کرینگے ۔ دونوں ملکوں کو کئی دہشت گردانہ حملوں کا نشانہ بننا پڑا ہے ۔ دونوں ملکوں نے فیصلہ کیا ہے کہ وہ اس ضمن میںانٹلی جنس اطلاعات کے تبادلہ کو مستحکم کرینگے ۔ دونوں ملکوں نے پاکستان سے کہا ہے کہ وہ پٹھان کوٹ حملوں کے ذمہ داروں کو کیفر کردار تک پہونچائے ۔ وزیر اعظم نریندر مودی اور فرینوکئی اولاند نے باہمی بات چیت میں کہا کہ لشکرطیبہ ‘ جئیش محمد ‘ حزب المجاہدین ‘ حقانی نیٹ ورک اور دوسرے دہشت گرد گروپس کے خلاف سخت کارروائی کی جانی چاہئے ۔ مودی نے کہا کہ پیرس سے پٹھان کوٹ تک ہم نے دہشت گردی کے مشترکہ چیلنج کا سامنا کیا ہے ۔ ضرورت اس بات کی ہے کہ اس لعنت سے نمٹنے کے اقدامات پر توجہ دی جائے ۔ انہوں نے کہا کہ ہمارا خیال یہ ہے کہ عالمی برادری کو ان عناصر کے خلاف فیصلہ کن کارروائی کی ضرورت ہے جو دہشت گردوں کو محفوظ پناہ گاہ فراہم کرتے ہیں۔ انہیں بڑھاوا دیتے ہیں۔ انہیں فینانس اور ٹریننگ کے علاوہ انفرا اسٹرکچر فراہم کرتے ہیں۔ مزید کہا گیا ہے کہ ہندوستان اور فرانس دہشت گردوں کی بھرتیوں ‘ ان کی نقل و حرکت کو روکنے اور بیرونی دہشت گرد لڑاکوں کے بہاؤ کو روکنے کے علاوہ ان کی فینانسنگ کے ذرائع کو روکنے کیلئے بھی ایک دوسرے سے تعاون کرینگے ۔ اولاند کل یوم جمہوریہ پریڈ کے مہمان خصوصی ہونگے ۔

TOPPOPULARRECENT