ہند ۔ اومان باہمی تعلقات کو مزید مستحکم پر بنانے دونوں ملکوں کا غور

نئی دہلی 3 جون ( سیاست ڈاٹ کام ) وزیر خارجہ سشما سواراج نے آج اپنے اومان کے ہم منصب یوسف بن علاوی بن عبداللہ سے یہاں ملاقات کرکے دونوں ملکوں کے مابین باہمی تعلقات کو مزید مستحکم بنانے اور ہندوستان سے پراجیکٹس برآمدات میں اضافہ کرنے کے سلسلہ میں تبادلہ خیال کیا ۔ دونوںملکوں کے مابین اعلی سطح پر روابط اور مراسم کو مسلسل جاری رکھنے کا ا

نئی دہلی 3 جون ( سیاست ڈاٹ کام ) وزیر خارجہ سشما سواراج نے آج اپنے اومان کے ہم منصب یوسف بن علاوی بن عبداللہ سے یہاں ملاقات کرکے دونوں ملکوں کے مابین باہمی تعلقات کو مزید مستحکم بنانے اور ہندوستان سے پراجیکٹس برآمدات میں اضافہ کرنے کے سلسلہ میں تبادلہ خیال کیا ۔ دونوںملکوں کے مابین اعلی سطح پر روابط اور مراسم کو مسلسل جاری رکھنے کا اشارہ دیتے ہوئے اومان کے وزیر خارجہ ان دنوں ہندوستان کے دورہ پر ہیں۔ ہندوستان میں نریندر مودی کی زیر قیادت این ڈی اے حکومت کے اقتدار پر آنے کے بعد کسی بیرونی مہمان کا یہ پہلا دورہ ہندوستان ہے ۔ اس ملاقات کے دوران دونوں وزرائے خارجہ نے باہمی تعلقات کے مختلف پہلووں بشمول سیاسی ‘ معاشی ‘ دفاعی ‘ سکیوریٹی اور عوام تا عوام رابطوں کا جائزہ لیا

اور اس بات سے اتفاق کیا کہ ان رابطوں اورتعلقات کو مزید مستحکم کیا جانا چاہئے ۔ سرکاری ذرائع نے یہ بات بتائی ۔ دورہ کنندہ مہمان نے سشما سواراج کو وزارت خارجہ کی ذمہ داری سنبھالنے پر مبارکباد دی اور انہیں کسی اولین تاریخ میں اومان کا دورہ کرنے کی دعوت دی ۔ سشما سواراج نے دورہ کی دعوت قبول کرلی ہے تاہم تواریخ کا تعین بعد میں سفارتی ذرائع سے کیا جائیگا ۔ عہدیداروں نے بترایا کہ آج کی ملاقات میں ہندوستان سے اومان کو پراجیکٹس برآمدات میں اضافہ کرنے کے امکانات پر بھی تبادلہ خیال کیا گیا ۔

2013 کے دوران ہندوستانی کمپنیوں کو اومان میں 1.25 بلین ڈالرس کے مختلف پراجیکٹس حاصل ہوئے تھے ۔ دونوں وزیروں نے اس احساس کا اظہار کیا کہ اس رجحان کو برقرار رکھنے کی ضرورت ہے ۔ دونوں وزیروں نے ہند ۔ اومان مشترکہ کمیشن جاریہ سال کے اواخر میں اجلاس منعقد کرنے سے اتفاق کیا تاکہ دونوں ملکوں کے مابین بڑھتے ہوئے معاشی تعلقات کو مزید آگے بڑھایا جاسکے اور تجارتی سرگرمیوں میں بہتری پیدا ہوسکے ۔ خلیج کے علاقہ میں اومان ہندوستان کا ایک اہم تجارتی شریک ہے اور دونوں ملکوں کے مابین 2013 – 14 میں تجارت کا ٹرن اوور 5.70 بلین ڈالرس کا رہا ہے ۔ اومان میں تقریبا 50 ہند ۔ اومان مشترکہ وینچرس کام کر رہے ہیں۔ دونوں ملکوں کے مابین دفاعی تعلقات بھی ہیں اور ان کی جزوی بحری مشقیں بھی ہوتی رہتی ہیں۔ اومان اور ہندوستان خلیج عدن میں قزاقی کے خلاف سرگرمیوں میں بھی تعاون کرتے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT