Saturday , December 16 2017
Home / شہر کی خبریں / ہورڈنگس سے متعلق فیس وصولی میں بے قاعدگی

ہورڈنگس سے متعلق فیس وصولی میں بے قاعدگی

حساب کتاب میں عدم مطابقت، جی ایچ ایم سی عہدیداروں کی لاپرواہی
حیدرآباد ۔ 23 ستمبر (سیاست نیوز) جی ایچ ایم سی میں ہورڈنگ سے متعلق عہدیداران کے حساب کتاب میں مطابقت نہیں ہے۔ شہر میں تقریباً 5000 ہورڈنگس نظر آرہے ہیں مگر عہدیداران کے حساب کتاب میں صرف 2684 ہی ہیں۔ ان ہورڈنگس سے سالانہ 30 کروڑ فیس وصول ہونی چاہئے مگر 15 کروڑ روپئے بھی وصول نہیں ہوپارہے ہیں۔ دوسری جانب غیرقانونی ہورڈنگس پر روک بھی نہیں لگا پارہے ہیں۔ عہدیداران ان ہورڈنگس کو نہ تو برخاست کررہے ہیں اور نہ ہی جرمانے کے طور پر فیس وصول کررہے ہیں۔ علاوہ ازیں تیز رفتار ہواؤں کے ذریعہ بھاری ہورڈنگس گرنے کی وجہ سے شدید نقصانات اٹھانے کا بھی خدشہ پایا جاتا ہے۔ سال گذشتہ کے تجربہ کو مدنظر رکھتے ہوئے ماہ جولائی میں تمام ہورڈنگس پر امتناع عائد کرنے کے علاوہ ان غیرقانونی ہورڈنگس کو برخاست نہیں کیا گیا۔ اس مناسبت سے قانونی طور پر لگائے گئے تمام ہورڈنگس کی تفصیلات آن لائن کرنے کا عہدیداران نے فیصلہ کیا ہے۔ جائیداد ٹیکس کی طرح تمام تفصیلات آن لائن میں لائسنس نمبرات کے ساتھ ہورڈنگس کے ڈیٹا بیس تیار کررہے ہیں اور یہ عمل تقریباً دو ماہ میں مکمل کرلیا جائے گا اور اس کی تکمیل پر ابتداء میں جیوٹیاگنگ سے متعلق بھی عہدیداران غور کررہے ہیں، جس کی وجہ سے بہ آسانی غیرقانونی ہورڈنگس کی نشاندہی کے ساتھ ساتھ ان پر جرمانوں کی شکل میں فیس بھی وصول کرنے میں سہولیات ہوں گی۔ سال گذشتہ جوبلی ہلز میں یونی پول ہورڈنگ گرنے سے کئی کاروں کو نقصان پہنچا تھا اس وقت شہرمیں غیرقانونی ہورڈنگس کے خلاف کارروائی گئی تھی اور سرکل کی سطح پر 972 ہورڈنگس کی تنقیح کرنے پر ان میں 83 غیرقانونی ہورڈنگس پائے گئے۔ مرکزی دفتر میں شعبہ اشتہارات سے متعلق انجینئرس پر مشتمل ایک اور ٹیم نے 894 ہورڈنگس کی تنقیح کرنے پر ان میں 41 غیرقانونی ہورڈنگس کی نشاندہی کی گئی اور عہدیدراان نے اعلان کیا تھا کہ تنقیحی عمل کی تکمیل کے بعد غیرقانونی ہورڈنگس کو برخاست کردیا جائے گا۔ بعدازاں تاحال 333 غیرقانونی ہورڈنگس کی نشاندہی کی گئی ہے اور ان ہورڈنگس کی برخاستگی کیلئے ٹنڈرس طلب کئے گئے مگر صرف ایک ہی ٹنڈرس وصول ہونے کی وجہ سے اس عمل کو منسوخ کردیا گیا اور اب دوبارہ ٹنڈرس طلب کرنے کیلئے پروگرام ترتیب دے رہے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT