Saturday , November 25 2017
Home / ہندوستان / ہوسٹن یونیورسٹی میں 200 ہندوستانی طلبہ پانی میں محصور

ہوسٹن یونیورسٹی میں 200 ہندوستانی طلبہ پانی میں محصور

دو طلبہ دواخانہ میں شریک ، سشما سوراج کا بیان
نئی دہلی ۔28 اگسٹ ۔ ( سیاست ڈاٹ کام ) وزیر خارجہ سشما سوراج نے آج کہاکہ امریکہ میں طوفان ’’ہاروی ‘‘ کے دوران سیلاب کے نتیجہ میں ہوسٹن یونیورسٹی میں 200 ہندوستانی طلبہ شالینی اور نکھل بھاٹیہ کو خصوصی طبی نگہداشت کے یونٹ ( آئی سی یو ) میں شریک کردیا گیا ہے اور ہوسٹن میں واقع ہندوستانی قونصل خانہ کے ذمہ دار ضروری مدد کی فراہمی کیلئے ان تک پہونچ گئے ہیں۔ طلبہ کے بارے میں مزید تفصیلات کا انتظار ہے ۔ سشما سوراج نے ٹوئٹر پر لکھا کہ ’’ہوسٹن میں ہندوستانی قونصل جنرل نے مجھے اطلاع دی ہے کہ 200ہندوستانی طلبہ سیلابی پانی میں محصور ہوگئے ہیں اور گردن تک پانی میں ڈوب گئے تھے ‘‘ ۔ سشما سوراج نے سلسلہ وار ٹوئٹس میں مزید لکھا کہ ہندوستانی قونصل خانہ نے ان طلبہ کو غذا فراہم کرنے کی کوشش کی تھی لیکن امریکی ساحلی گارڈس نے اس کی اجازت نہیں دی کیونکہ راحت کاری کیلئے کشتیاں درکار تھیں۔ انھوں نے کہاکہ دواخانہ میں زیرعلاج طلبہ تک ان کے رشتہ داروں کی ممکنہ جلد رسائی کو یقینی بنانے کیلئے وزارت اُمور خارجہ کی مساعی جاری ہے ۔ سشما سوراج نے ایک اور ٹوئیٹ میں لکھا کہ ’’ہوسٹن میں ہمارے قونصل جنرل مسٹر انوپم رائے راحت و امداد کے کاموں میں مصروف ہیں‘‘۔

 

TOPPOPULARRECENT