Monday , December 11 2017
Home / شہر کی خبریں / ہیلمٹ کی اہمیت سے واقف کرانا ضروری : ہائیکورٹ

ہیلمٹ کی اہمیت سے واقف کرانا ضروری : ہائیکورٹ

عوام میں ہیلمٹ استعمال کرنے کی شعور بیداری مہم کی ہدایت
حیدرآباد۔ 17 ستمبر (سیاست نیوز) ریاستی محکمہ ٹرانسپورٹ دو پہیوں والی گاڑیاں چلانے والوں کیلئے (ٹو وہیلرس بائیک رائیڈرس) ہیلمٹ کے استعمال کو ضروری و یقینی بنانے کیلئے وسیع پیمانے پر اقدامات اور کوششوں کا آغاز کردیا ہے لیکن محکمہ ٹرانسپورٹ کے تیز تر اقدامات و کوششوں کو ہائیکورٹ نے روک (بریک) لگاتے ہوئے حکومت بالخصوص محکمہ ٹرانسپورٹ کو اس بات کی سخت ہدایات دی کہ دو پہیوں والی گاڑیاں چلانے والوں میں ہیلمٹ کی اہمیت سے واقف کروانے کے بعد ہی ہیلمٹ کے استعمال کو یقینی و ضروری بنائیں۔ محکمہ ٹرانسپورٹ کے ذرائع نے یہ بات بتائی اور کہا کہ ہائیکورٹ کی ہدایات کی روشنی میں گریٹر حیدرآباد کے حدود میں حیدرآباد اور رنگاریڈی ضلع کے اعلیٰ عہدیداران محکمہ ٹرانسپورٹ نے پمفلٹس، وال پوسٹرس، فلیکس، سنیما سلائیڈز کے ساتھ ساتھ عوام میں ہیلمٹ استعمال کرنے سے متعلق مکمل تفصیلات فراہم کرکے ان میں بیداری پیدا کرنے کے اقدامات کررہے ہیں۔ علاوہ ازیں کالجوں میں بھی بڑے پیمانے پر ہیلمٹ پہننے سے متعلق لزوم کی تشہیر کی جارہی ہے تاکہ کالجوں کے طلباء اگر ہیلمٹ استعمال کرنا شروع کردیں گے تو خودبخود دیگر عوام پر بھی اس کے مثبت اثرات مرتب ہوسکیں گے۔ روزانہ پیش آنے والے سڑک حادثات میں دو پہیوں کی گاڑی چلانے والے افراد کی اموات 70 تا 80 فیصد صرف اور صرف ہیلمٹ کے استعمال نہ کرنے (نہ پہننے) کی وجہ سے ہی پیش آرہی ہیں۔ اگر دو پہیے والی گاڑیاں چلانے والے افراد اپنی گاڑیاں چلاتے وقت ہیلمٹ کا استعمال کریں گے تو کوئی حادثہ پیش آنے کی صورت میں بھی ان افراد کا سر محفوظ رہ سکتا ہے جس کی وجہ سے حادثہ کا اثر بہت ہی کم ہوجاتا ہے۔ ہیلمٹ استعمال کے تعلق سے بیداری پیدا کرنے کے بعد بھی اگر کوئی ہیلمٹ کا استعمال نہ کرنے کی صورت میں ان افراد پر 1000 ایک ہزار روپئے جرمانہ عائد کرنے کی بھی بڑے پیمانے پر تشہیر کی جارہی ہے۔ اسی دوران مسٹر رگھوناتھ جوائنٹ ٹرانسپورٹ کمشنر حیدرآباد اور مسٹر پروین راؤ ڈپٹی کمشنر ٹرانسپورٹ ضلع رنگاریڈی نے بھی بتایا کہ ہیلمٹ استعمال کرنے کے تعلق سے عوام میں بڑے پیمانے پر بیداری پیدا کرنے کیلئے اقدامات کئے جارہے ہیں اور اس بیداری پیدا کرنے کیلئے کئے جانے والے اقدامات کے دوران عوام کی جانب سے مثبت ردعمل بھی حاصل ہورہا ہے۔

TOPPOPULARRECENT