Wednesday , December 12 2018

یمنی مساجد میں خودکش دھماکے ، 142 جاں بحق

صنعا ، 20 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) خودکش بم دھماکوں میں جن کی ذمے داری اسلامک اسٹیٹ (آئی ایس) گروپ نے قبول کرلی ، آج جمعہ کے موقع پر یمنی دارالحکومت کی مسجدوں میں کم از کم 142 افراد جاں بحق اور 345 دیگر زخمی ہوگئے، جبکہ اس حملے میں حوثی جنگجوؤں کے بشمول مصلیوں کو نشانہ بنایا گیا۔ یہ دھماکے یمن میں مہلک ترین حملوں میں سے ہیں، جو بڑھتے عدم استحکا

صنعا ، 20 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) خودکش بم دھماکوں میں جن کی ذمے داری اسلامک اسٹیٹ (آئی ایس) گروپ نے قبول کرلی ، آج جمعہ کے موقع پر یمنی دارالحکومت کی مسجدوں میں کم از کم 142 افراد جاں بحق اور 345 دیگر زخمی ہوگئے، جبکہ اس حملے میں حوثی جنگجوؤں کے بشمول مصلیوں کو نشانہ بنایا گیا۔ یہ دھماکے یمن میں مہلک ترین حملوں میں سے ہیں، جو بڑھتے عدم استحکام اور فرقہ وارانہ خطوط پر تقسیم سے نمٹنے کی جدوجہد کررہا ہے۔ یہ دھماکے اُن جھڑپوں کے ایک روز بعد پیش آئے جو صدر عبدالربو منصور ہادی کی وفادار فورسیس اور حوثی ملیشیا کے حلیفوں کے درمیان جنوبی شہر عدن میں ہوئیں، جہاں کا لیڈر گزشتہ ماہ فرار ہوگیا۔ خودکش بمباروں نے دو مساجد کو نشانہ بنایا جہاں حوثی جمع تھے، جنھیں دارالحکومت صنعا پر کنٹرول حاصل ہے۔ ایک دھماکہ جنوبی صنعا کی مسجد بدر کے اندرون ہوا جبکہ دیگر نے مصلیوں کو نشانہ بنایا جب وہ باہر کی طرف دوڑ پڑے تھے، عینی شاہدین نے یہ بات بتائی۔ ایک اور خودکش بمبار نے شمالی صنعا کی مسجد الحشوش کو نشانہ بنایا۔

TOPPOPULARRECENT