Monday , July 23 2018
Home / دنیا / یمن میں بندرگاہیں اور طیرانگاہیں

یمن میں بندرگاہیں اور طیرانگاہیں

دوبارہ کھولی جائیں گی : سعودی عرب
دوبئی ۔ 13 نومبر (سیاست ڈاٹ کام) اقوام متحدہ میں سعودی عرب کے سفارتخانے سے جاری ایک بیان کے مطابق یمن میں سعودی قیادت والا جو اتحاد اس وقت شیعہ باغیوں سے نبردآزما ہے، وہ جلد ہی ایئرپورٹس اور بندرگاہوں کی بازکشادگی کرے گا۔ یاد رہیکہ یمن کو عالم عرب کا غریب ترین ملک تصور کیا جاتا ہے۔ بیان کے مطابق اس معاملہ میں پہلی پیشرفت اندرون 24 گھنٹے کی جائے گی جس میں یمن کی بین الاقوامی سطح پر مسلمہ حکومت کے علاقوں کی جنہیں سعودی قیادت والا اتحاد بھی تسلیم کرتا ہے، بندرگاہوں اور طیرانگاہوں کی بازکشادگی شامل ہے۔ یہ بندرگاہیں اور طیرانگاہیں عدن، موچا اور مکلا میں واقع ہیں۔ یاد رہیکہ سعودی عرب نے 4 نومبر کو ریاض میں بین الاقوامی طیرانگاہ کے قریب شیعہ حوثی باغیوں کی جانب سے بالسٹک میزائل داغے جانے کے بعد تمام بندرگاہوں اور طیرانگاہ کو بند کرنے کا اعلان کیا تھا جبکہ سعودی عرب اور ایران نے حملہ میں استعمال کئے جانے والے بالسٹک میزائل سربراہ کرنے کیلئے ایران کو موردالزام ٹھہرایا تھا جبکہ حوثیوں نے اس کی تردید کی تھی۔

TOPPOPULARRECENT